بجٹ اجلاس میں ہونے والے ناخوشگوار واقعات ، سپیکر قومی اسمبلی نے اراکین کو خبردار کردیا 

بجٹ اجلاس میں ہونے والے ناخوشگوار واقعات ، سپیکر قومی اسمبلی نے اراکین کو ...
بجٹ اجلاس میں ہونے والے ناخوشگوار واقعات ، سپیکر قومی اسمبلی نے اراکین کو خبردار کردیا 

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)ترجمان سپیکر قومی اسمبلی نے کہا ہے کہ اسد قیصر کو بجٹ اجلاس میں ہونے والے ناخوشگوار واقعات پر دلی رنج پہنچا ہے،سپیکر قومی اسمبلی نے ہمیشہ حکومت و اپوزیشن کے ساتھ مساوی رویہ اپنایا ہے،سپیکر قومی اسمبلی کی نشست غیر جانبداریت کا تقاضا کرتی ہے اور سپیکر اسد قیصر اسی پر کاربند ہیں، سپیکر قومی اسمبلی نے یکساں طور پر حکومت و اپوزیشن ارکان کے خلاف کارروائی کی، اسد قیصر نے ایوان کا ماحول سازگار رکھنے پر کوئی سمجھوتہ کیا اور نہ ہی کریں گے،کچھ متنازعہ باتیں پھیلا کر ایوان کی بے توقیری نہ کی جائے ۔

اپنے بیان میں ترجمان سپیکر قومی اسمبلی نے کہاکہ سپیکراسد قیصر  نے ماحول سازگار رکھنے کے لیے سینئر پارلیمنٹرین پر مشتمل کمیٹی قائم کرنے کا اعلان کیا،کمیٹی قائم کرنے کا بنیادی مقصد ایوان کے ماحول کو خراب کرنے والو ان کی نشاندہی کرنا اور ماحول کو سازگار بنانا تھا۔انہوں نے کہا کہ کمیٹی بنانے کا بنیادی مقصد غیر پارلیمانی الفاظ، حرکات کے تدارک کے ساتھ ماحول خراب کرنے والوں کی نشاندھی کرکے کارروائی کرنا تھا، سپیکر نے اپنے اختیار استعمال کرتے ہوئے حکومت و اپوزیشن کےسات ارکان کے خلاف کارروائی کی، حکومت و اپوزیشن کے مفاہمت کے باعث اور مطالبے پر پابندی ایوان کا ماحول سازگار رکھنے کی شرط پر اٹھائی گئی،سپیکر کے کردار کے باعث ہی حکومت و اپوزیشن کی باہمی مفاہمت کے باعث معاملات خوش اسلوبی سے طے پائے۔

ترجمان کے مطابق سپیکر نے واضح کردیا تھا کہ جب تک آپس میں ہم آہنگی نہیں قائم ہوگی کارروائی نہیں چلے گی، اس ہم آہنگی کے بعد ہی ایوان کی کارروائی چلائی جارہی ہے اور بجٹ پر بحث جاری ہے۔ترجمان نے کہاکہ احتجاج سب کا حق ہے البتہ یہ احتجاج قواعد، روایات کے مطابق ہو تو ہی قابل قبول ہوگا،ایوان کے تقدس اور اس کی عزت و توقیر میں اضافے کی ذمہ داری بنیادی طور حکومت اور اپوزیشن دونوں پر عائد ہوتی ہے۔ترجمان نے کہا کہ سپیکر قومی اسمبلی نے حکومت و اپوزیشن ارکان پر واضح کردیا ہے کہ قواعد و پارلیمانی روایات پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائیگا۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -