محکمہ داخلہ پنجاب کو کام کرنے کی کتنی آزادی ، عثمان بزدار نے کھل کر بتا دیا

محکمہ داخلہ پنجاب کو کام کرنے کی کتنی آزادی ، عثمان بزدار نے کھل کر بتا دیا
محکمہ داخلہ پنجاب کو کام کرنے کی کتنی آزادی ، عثمان بزدار نے کھل کر بتا دیا

  

لاہور ( ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے محکمہ داخلہ پنجاب سے متعلق کہا کہ صوبائی محکمہ داخلہ کو کام کرنے کی مکمل پوری آزادی دی ہے ۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار سے چیف سیکرٹری پنجاب جواد رفیق ملک اور ایڈیشنل چیف سیکرٹری داخلہ مومن آغا نے ملاقات کی ، ملاقات میں  چیف سیکرٹری نے وزیر اعلی عثمان بزدار کو محکمہ داخلہ کے قیام کے 100 سال مکمل ہونے پر یادگاری شیلڈ پیش کی۔

وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے محکمہ داخلہ پنجاب کی کارکردگی اور محکمہ جیل خانہ جات میں اصلاحات کے حوالے سے اقدامات کو سراہا اور کہا کہ  پنجاب حکومت نے جیلوں کے نظام میں دور رس اصلاحات کی ہیں ، نظام میں اصلاحات کا مقصد جیلوں میں قیدیوں کے بنیادی حقوق کا تحفظ ہے ، محکمہ داخلہ پنجاب کو کام کرنے کی پوری آزادی دی ہے۔

سردار عثمان بزدار کا کہنا تھا کہ پنجاب کی 7جیلوں میں ملٹی سٹوری بیرکس بنائی جارہی ہیں ، ملٹی سٹوری بیرکس میں 10ہزار قیدیوں کی گنجائش ہوگی، سزا وجزا کے بغیر کوئی نظام آگے نہیں بڑھ سکتا، پنجاب کی 21جیلوں میں پریزنرز مینجمنٹ انفارمیشن سسٹم شرو ع ہو چکا ہے، جیلوں میں کورٹ رومز کا قیام بھی عمل میں لایا گیاہے، بلوچ لیویز کا دائرہ کار راجن پور تک بڑھا یا گیا ہے۔

وزیر اعلیٰ نے کہا کہ قیدی بھی انسان ہیں اور انہیں بھی حقوق حاصل ہیں ، جیل کے گلے سڑے نظام کو تبدیل کر رہے ہیں، ایڈیشنل چیف سیکرٹری داخلہ نے محکمہ داخلہ کی کارکردگی، جیلوں کے نظام میں اصلاحات اور دیگر اہم امور کے بارے میں بریفنگ دی۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -