جونی ڈیپ "اصل"امبر ہرڈ نے "مگر مچھ کے آنسو" بہائے، ہرجانہ کیس سننے والی جیوری کے رکن کا دعویٰ 

جونی ڈیپ "اصل"امبر ہرڈ نے "مگر مچھ کے آنسو" بہائے، ہرجانہ کیس سننے والی جیوری ...
جونی ڈیپ

  

واشنگٹن (ڈیلی پاکستان آن لائن) ہالی ووڈ اداکار جونی ڈیپ کا اپنی سابق اہلیہ اداکارہ امبر ہرڈ کے خلاف ہرجانے کا کیس سننے والی جیوری کے ایک رکن نے کمرہ عدالت کے ماحول کے بارے میں دلچسپ انکشاف کردیا۔

کیس میں جیوری کے ارکان نے جونی ڈیپ کے حق میں فیصلہ سنایا تھا، اب جیوری کے ایک رکن نے اس کی وضاحت کی ہے کہ انہوں نے ایسا کیوں کیا تھا۔ انڈیا ٹوڈے کے مطابق  جونی ڈیپ اور امبر ہرڈ کا کیس سننے والی جیوری کے ارکان کی تعداد سات تھی ، ایک رکن کا کہنا ہے کہ امبر ہرڈ نے کیس کی سماعت کے دوران جو آنسو بہائے اور جس طرح کے چہرے کے تاثرات دیے ان سے جیوری غیر مطمئن  ہوئی،  وہ ایک سوال کا جواب دیتی اور پھر رونے لگتی اور اس کے ٹھیک دو سیکنڈ کے بعد امبر کا چہرہ بالکل سپاٹ ہوجاتا ، جیوری کے بعض ارکان نے اداکارہ کے آنسوؤں کو مگر مچھ کے آنسوؤں سے تشبیہہ دی۔

جیوری کے رکن کا کہنا ہے کہ جیوری کے اکثر ارکان سمجھتے تھے کہ جونی ڈیپ جو بھی کہہ رہے ہیں وہ بالکل حقیقت پر مبنی ہے، جب وہ سوالوں کا جواب دے رہے تھے تو وہ زیادہ حقیقت پر مبنی تھے اور لگ رہا تھا کہ جونی سچ بول رہے ہیں، پورے کیس کے دوران وہ جذباتی طور پر انتہائی مستحکم رہے۔

خیال رہے کہ جونی ڈیپ نے امبر ہرڈ کے خلاف واشنگٹن پوسٹ میں لکھے گئے ایک آرٹیکل پر ہرجانے کا دعویٰ دائر کیا تھا۔ ریاست ورجینیا کی فیئر فوکس کاؤنٹی کی جیوری نے کیس میں جونی ڈیپ کا موقف درست قرار دیتے ہوئے فیصلہ ان کے حق میں سنایا تھا۔ اگرچہ جونی ڈیپ نے 50 ملین ڈالر کے ہرجانے کا دعویٰ کیا تھا تاہم جیوری نے 15 ملین ڈالر کا دعویٰ قبول کیا جس کو بعد ازاں جج نے کم کرکے 10 ملین ڈالر کردیا تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -