ضلع راجنپور میں 9بنیادی مراکز صحت بنیں گے،دوست مزاری

ضلع راجنپور میں 9بنیادی مراکز صحت بنیں گے،دوست مزاری

  

راجن پور(ڈسٹرکٹ رپورٹر،تحصیل رپورٹر) ڈپٹی اسپیکر پنجاب اسمبلی سردار دوست محمد خان مزاری نے کہا ہے کہ ضلع راجن پور میں 9 بنیادی مراکز صحت بنیں گے اورآر ایچ سی فاضل پور سمیت چار بی ایچ یوز کو اپ گریڈ کیا جائیگا۔حکومت پنجاب نے نئے مالی سال کے (بقیہ نمبر16صفحہ6پر)

بجٹ میں 200 بیڈ کے زچہ بچہ ہسپتال کیلئے بھی فنڈز مختص کردئیے۔ضلعی صدر ہسپتال میں ٹراما سنٹر بھی بنے گا۔ڈپٹی اسپیکر پنجاب اسمبلی سردار دوست محمد خان مزاری نے کہا ہے کہ وزیر اعلی پنجاب میاں محمد حمزہ شہباز شریف کی ہدایت پر بنیادی مراکز صحت عمر کوٹ،شکار پور اور کوٹ مہانی کو دیہی مرکز صحت کا درجہ دیا جائیگا۔بجٹ 2022-23 میں ابتدائی فنڈز رکھے گئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ 200 بیڈ کے مدر اینڈ چائلڈ ہسپتال پر تقریبا ساڑھے آٹھ ارب روپے خرچ ہوں گے اور نئے بجٹ میں دس لاکھ روپے رکھے گئے ہیں۔آر ایچ سی فاضل پور کو تحصیل سطح کے ہسپتال کا درجہ دیا جائیگا جس پر تقریبا 13 کروڑ روپے خرچ ہوں گے اور نئے بجٹ میں ایک کروڑ روپے سے زائد رقم مختص کردی گئی ہے۔ا سی طرح نئے 9 بیسک ہیلتھ یونٹ کے قیام کیلئے چالیس کروڑ روپے کا تخمینہ لگایا گیا ہے اور بجٹ میں ابتدائی فنڈز مختص کردئیے گئے ہیں۔ڈی ایچ کیو ہسپتال میں ٹراما سنٹر کے قیام پر گیارہ کروڑ 75 لاکھ روپے خرچ ہوں گے اور بجٹ میں نو کروڑ پچیس لاکھ روپے رکھ گئے ہیں۔بی ایچ یو عمر کوٹ کی اپ گریڈیشن پر 12 کروڑ روپے اور بی ایچ یو شکار پور کی اپ گریڈیشن پر دس کروڑ روپے خرچ ہوں گے منصوبوں کیلئے بجٹ میں ابتدائی فنڈز رکھے گئے ہیں۔سردار دوست محمد خان مزاری نے کہا ہے وزیر اعلی پنجاب محمد حمزہ شہباز شریف نے صوبہ میں پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کئیر کی جاری اور نئی 219 سکیموں کیلئے بجٹ میں 21 ارب روپے مختص کردئیے ہیں۔انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت پنجاب کی اولین ترجیح ہے کہ شہر کے ساتھ دور دراز اور پسماندہ علاقوں میں بھی صحت کی بہترین سہولیات فراہم کی جائیں۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -