زیادتی نہیں، صرف ہراساں کیاگیا، پنجاب پولیس نے 9 سالہ بچی سے مبینہ زیادتی کا مقدمہ درج  کرنے سے انکار کردیا

زیادتی نہیں، صرف ہراساں کیاگیا، پنجاب پولیس نے 9 سالہ بچی سے مبینہ زیادتی کا ...
زیادتی نہیں، صرف ہراساں کیاگیا، پنجاب پولیس نے 9 سالہ بچی سے مبینہ زیادتی کا مقدمہ درج  کرنے سے انکار کردیا

  

لاہور (ویب ڈیسک)  روجھان میں 9 سالہ بچی کو مبینہ طورپر زیادتی کا نشانہ بنا دیا گیا، پولیس نے مقدمہ درج کرنے سے انکار کرتے ہوئے کہا ہے کہ بچی کو صرف ہراساں کیا گیا زیادتی کا نشانہ نہیں بنایا گیا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق  تھانہ شاہوالی کی حدود میں بااثر شخص نے 9 سالہ بچی کو زیادتی کا نشانہ بنایا۔بچی اہل خانہ کا کہنا ہے کہ بچی کو زیادتی کے بعد جھاڑیوں میں پھینک دیا گیا، اطلاع ملنے پر پولیس جائے وقوع پر پہنچی تو بچی کے ہاتھ پاؤں بندھے ہوئے تھے۔

اہل خانہ کے مطابق پولیس بااثر افراد سے ملی ہوئی ہے، بچی کا میڈیکل بھی نہیں ہونے دیا گیا، شاہوالی پولیس نے تاحال ملزم کے خلاف مقدمہ درج نہیں کیا۔اہل خانہ نے ڈی آئی جی، آر پی او ڈی جی خان اور ڈی پی او راجن پور سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

دوسری جانب پولیس کا کہنا ہے کہ بچی کو ہراساں کیا گیا ہے لیکن زیادتی کا نشانہ نہیں بنایا گیا۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -