معزور افراد کے لےے نوکرےاں دو فےصد کوٹہ پر عملدرآمد ےقےنی بنائےں گئے

معزور افراد کے لےے نوکرےاں دو فےصد کوٹہ پر عملدرآمد ےقےنی بنائےں گئے

                                   اسلام آباد(این این آئی) پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ تحریک انصاف معذور افراد کو ملازمتوں سمیت دیگر شعبوں میں 2فیصد کوٹہ پر عملدرآمد یقینی بنائے گی ،ایوان صدر اور پنجاب کے حکمران سیاستدانوں کی وفاداریاں خریدنے میں لگے ہوئے ہیں اور ہر سیاستدان کی قیمت لگی ہوئی ہے، یہ میرجعفر اور میر صادق ہیں، ان کا کوئی کعبہ اور قبلہ نہیں ہے، 23 مارچ کو سونامی جنگلہ بس پر بیٹھ کر مینار پاکستان پہنچے گا،23 مارچ کو یوم نجات اور سٹیس کو اور ظلم کے نظام کے خلاف ریفرنڈم ہو گا ،معذورافراد کو معاشرے کا حصہ بناکر ملکی سیاست میں لائیں گے ،ملک کی پندرہ فیصد آبادی معذوروں پر مشتمل ہونے کے باوجودمعاشرے میں ان کا وجود نظرنہیں آتا ، مولانا فضل الرحمان پانچ سال تک زرداری کاحلوہ کھاتے رہے اور اب نواز شریف کا حلوہ کھانے کیلئے ان کے ساتھ اتحاد کرلیا،خادم اعلیٰ 23مارچ کے تحریک انصاف کے جلسے کو ناکام بنانے کیلئے حکومت نہیں چھوڑ رہے ،وہ تحریک انصاف کے نوجوانوں کے جنون کا مقابلہ نہیں کرسکیں گے،اقتدار میں آکر معذوروں کو آئینی وقانونی ،معاشی ،سماجی اورتعلیمی لحاظ سے بااختیار بنائیں گے۔ ان خیالات کا اظہار عمران خان نے یہاں انصاف سٹودنٹس فیڈریشن کے زیر اہتمام"آج کا نوجوان اور نیا پاکستان "کے موضوع پر اور پاکستان تحریک انصاف کی معذورافراد کیلئے پالیسی کی تقریبات سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔پالیسی کی تقریب میں تحریک انصاف کے مرکزی رہنما جہانگیر خان ترین ،ڈاکٹر اسرارشاہ ،ضیغم رضوی ،معروف گلوکار سلمان احمد ،نفیسہ خٹک و دیگر موجودتھے ۔انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف کے 23مار چ کو مینا ر پاکستان کے جلسہ کو ناکام بنا نے کیلئے خادم اعلی پنجاب خوفزدہ ہو کر حکومت اس لئے نہیں چھوڑ رہے ہیں تاکہ پٹواری اور پولیس اپنی ہو۔ خادم اعلی جتنا مرضی زور لگا لیں جنون کی طاقت کا سامنا نہیں کر سکیں گے ۔اب ان کا وقت ختم ہو گیا ہے اورچلے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ خادم اعلی ہمارے نوجوانوں کو لیپ ٹاپ کے ذریعے خریدنے کوشش کر رہے ہیں لیکن انہیں معلوم نہیں کہ نظریات اور جنون کی کوئی قیمت نہیں ہوتی ان کو خریدنے کیلئے بہت کم قیمت لگائی ہے اور یہ نوجوان تحریک انصاف کو ہی ووٹ دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ لوگوں کی وفاداریاں بدلنے کیلئے ان کی قیمتیں لگائی جا رہی ہیں اور ہر سیاستدان کی قیمت لگی ہوئی ہے۔ انہوں نے کہاکہ جنگلہ بس پر 70ارب روپے لگائے گئے ۔ اقتدار میںآ کر ان سے پائی پائی کا حساب لیا جائے گا ۔ انہوں نے کہا کہ ان مفاد پرست سیاستدانوں کو پاکستان اورعوام کی فکر نہیں ہے۔ ان کو اپنے اپنے مفادات عزیز ہیں اور سب ایک دوسرے سے ملے ہوئے ہیں۔ اپنی اپنی باریاں لگائی ہوئی ہیں اور ایک دوسرے کا حلوہ کھانے میں لگے ہوئے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ عوام ان کرپٹ سیاستدانوں کو ووٹ نہ دیں جن کے پیسے ملک سے باہر پڑے ہوئے ہیں۔ ظلم کے نظام سے عوام کا خون چوس رہے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ ہم نے پارٹی الیکشن کروا کر پاکستان میں حقیقی جمہوریت کی ابتدا رکھی دی ہے جو سیاسی پارٹیاں الیکشن نہیں کرواتی ان کا مستقبل میں وجود ختم ہو جائے گا ۔انہوں نے کہا کہ شہبازشریف نے میٹرو بس سروس چلا کر ہمارا کام اور آسان کر دیا ہے 23 مارچ سونامی اس پر بیٹھ کر سونامی مینار پاکستان پہنچے گا۔ انہوں نے کہا کہ سونامی کے خاتمے کا پروپگنڈہ کیلئے میڈیا پر پیسہ لگایا اور لوگوں کو خرید ا گیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ اسلام معاشرے کے تمام افراد کو برابری کی سطح پر حقوق دیتا ہے ۔دنیا کی پہلی فلاحی ریاست مسلمانوں نے بنائی ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں قانون نام کی کوئی چیز نہیں ہے جس طاقتور کا بس چلتا ہے وہ معاشرے کے کمزور طبقات کو مسل دیتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ بدقسمتی سے پاکستان میں معذور افراد کو ان کے بنیادی حقوق نہیں مل رہے جن کے ان سے وعدے کئے گئے تھے ۔انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف اقتدار میں آکر معذور افراد کو ان کے مکمل حقوق فراہم کرے گی اور ان کو معاشرے کا اہم حصہ بنائے گی ۔انہوں نے کہا کہ 23مارچ کے جلسے میں معذور افراد کیلئے مخصوص جگہ مختص کریں گے ۔

مزید : صفحہ اول