امریکہ میں کتوں کے حقوق انسانوں سے بھی زیادہ

امریکہ میں کتوں کے حقوق انسانوں سے بھی زیادہ
امریکہ میں کتوں کے حقوق انسانوں سے بھی زیادہ

  

فیونکس (مانیٹرنگ ڈیسک) انٹرنیٹ دنیا اس وقت اس کتے کی جان بچانے کے لئے تگ ودو میں مصروف ہے جس نے گزشتہ ماہ 4 سالہ کیون نامی بچے پر حملہ کرکے اسے شدید زخمی کردیا تھا۔ ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ کیون کے زخم ٹھیک کرنے میں کئی سرجرجیاں اور سال لگ سکتے ہیں۔ فی الحال یہ بچہ کھانا نہیں چبا سکتا اور ایک آنکھ سے دیکھ نہیں سکتا۔ ولانامی خاتون جو موقع پر موجود تھی، نے میکی نامی ”پٹ بل“ کتے کو موت کی نیند سلانے کی درخواست دے رکھی ہے۔ اس کے مطابق کیون نے کھیلتے ہوئے کتے کے قریب پڑی ہڈی اٹھالی جس پر کتے نے اس کا یہ حال کردیا۔ تاہم دوسری جانب ”کتے“ کے حمایتﺅں میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے۔ فیس بک پر اس کے ہمدردوں کی جانب سے بنائے گئے پیج پر 40 ہزار سے زائد لائیکس آچکے ہیں اور ایک آن لائن درخواست بھی اس کی جان بچانے کے لئے سائن کرائی جارہی ہے۔میکی کے ہمدردوں کا کہنا ہے کہ کتا تو بے زبان جانور ہے، اسے سزا دینے سے کیون کے زخم بھر نہیں جائیں گے۔ اس حوالے سے عدالت 25 مارچ کو فیصلہ سنائے گی۔

مزید : انسانی حقوق