حکمران،سرمایہ داراور بااثر افرادمعاشرے میں تمام برائیوں کی جڑہیں، عوامی رائے

حکمران،سرمایہ داراور بااثر افرادمعاشرے میں تمام برائیوں کی جڑہیں، عوامی ...

لاہور(انوسٹی گیشن سیل)حکمرانوں اور بااثر لوگوں کی عیاشیوں کی پیش نظر قانون کو روندا جا رہا ہے۔امتیازی سلوک،تعلیم کی کمی اور بیروز گاری کی وجہ سے پاکستان مسائلستان بن رہا ہے۔عورت کو مظلوم بنانے کا ذمہ دار امراءطبقہ ہے ۔روز نامہ پاکستان کی طرف سے کئے گئے سروے میں لاہور کے شہریو ں نے حکمرانوں ،سرمایہ داروں اور بااثر افراد کو معاشرے میں تمام برائیوں کی جڑ قرار دے دیا۔نجف علی اور محمد شیراز نے کہاکہ حکمران اور سرمایہ دار طبقہ اپنی عیاشیوں کےلئے غریب اور مجبور عورت کو رقص پر مجبور کرتا جہاںسے رقاصہ گناہوں کی مزید سیڑھیوں پر چڑھنا شروع ہو جاتی ہے۔ملک میں عورت کی مظلومیت کے پیچھے محلات میں بیٹھنے والو ں کا ہاتھ ہے۔کاظم خان اور توقیر حسین نے کہاکہ قانون نافذ کرنے ملک میں قانون کی کمزور تمام مسائل کی جڑ ہے ،تمام محکموں میں کرپشن عروج پر ہے لیکن حکومت ٹس سے مس نہیں ہے ۔عورت کے ساتھ بد اخلاقی کرنے والے کسی ایک فرد کو سزا دی جاتی تو دوبارہ ہوا کی بیٹی کی عصمت لوٹنے کی کوئی کوشش بھی نہ کرتا۔ملک میں اسلامی قوانین کا نفاذ وقت کی اہم ضرورت ہے۔رضا حیدر اور حشمت علی نے کہاکہ امیر اور غریب کا فرق نوجوان کو گناہوں میں دھکیل رہا ہے۔قانون نافذ کرنے والے جیبیں گرم کرنے میں مصروف ہیں ملک کو معجزانہ صلاحیتیں رکھنے والے لیڈر کی ضرورت ہے۔

عوامی رائے

مزید : صفحہ آخر