طالبان نے جنوبی وزیرستان سے فوج کے انخلاء کا مطا لبہ کیا ہے،رستم شاہ

طالبان نے جنوبی وزیرستان سے فوج کے انخلاء کا مطا لبہ کیا ہے،رستم شاہ


اسلام آباد (اے این این) طالبان کے ساتھ مذاکرات کے لئے قائم حکومتی کمیٹی کے رکن رستم شاہ مہمند نے کہا ہے کہ طالبان کو مذاکرات کے دوران ڈرون حملے نہ ہونے کی ضمانت نہیں دی جا سکتی،قبائلی علاقوں کے عوام نے نظام میں تبدیلی کا مطالبہ کبھی نہیں کیا مٹھی بھر لوگوں کے کہنے پر نظام8 میں تبدیلی نہیں کی جا سکتی،یہ طالبان کا نہیں حکومت اور پارلیمنٹ کا اختیار ہے۔ برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی سے گفتگو کرتے ہوئے رستم شاہ مہمند نے کہاکہ طالبان کی نقل و حرکت پر پابندی ہے اور انہوں نے مذاکرات میں آسانی کیلئے جنوبی وزیرستان کے کچھ علاقوں سے فوج کو نکالنے کی درخواست کی ہے تاکہ انہیں ڈرون حملوں اور پکڑے جانے کا خطرہ نہ ہو اور وہ سکون سے آجاسکیں ۔ جنوبی وزیرستان کے کسی علاقے میں ملاقات میں کوئی مضائقہ نہیں ہے وہاں کافی علاقوں میں فورسز موجود نہیں ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ طالبان کو ڈرون حملے نہ ہونے کی ضمانت نہیں دی جاسکتی ڈرون حملے امریکہ کرتا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ قبائلی علاقوں میں نظام سے طالبان کا کوئی تعلق نہیں نظام بنانا حکومت کا کام ہے اس پر کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا ۔

مزید : علاقائی