تحفظ نسواں کے نام پرنام نہاد قانون نافذ نہ کیا جائے،جماعت اسلامی حلقہ خواتین

تحفظ نسواں کے نام پرنام نہاد قانون نافذ نہ کیا جائے،جماعت اسلامی حلقہ خواتین

  

لاہور (خبر نگار خصوصی) جماعت اسلامی حلقہ خواتین پنجاب کے زیر اہتمام پاکستان کی خوشحالی میں عورت کا کردار کے عنوان پر خواتین کانفرنس میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ تحفظ نسواں کے نام پر کوئی نام نہاد قانون نافذ نہ کیا جائے جو ہمارے خاندانی نظام اور عائلی نظام کے لیے زہر قاتل ہو ۔گزشتہ روز رائل ہوٹل جو ہر ٹاؤن میں جماعت اسلامی حلقہ خواتین کے زیر اہتمام اہم کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ممبر قومی اسمبلی عائشہ سید ، ڈاکٹر سمیحہ راحیل قاضی ،ڈاکٹر حمیرا طارق، عظمیٰ نوید ، سکینہ شاہد ، ڈاکٹر جمیلہ شوکت ، رابعہ رحمن ، ڈاکٹر فرزانہ ، ڈاکٹر نیلم ، عروج کنول اور دیگر مقریرین نے کہا کہ ملک میں نظریاتی کرپشن ہمیں اپنے مقاصد و نظریے سے دور کر رہی ہے اسلام نے خواتین کے حقوق کا تحفظ چودہ سو سال پہلے ہی کر دیا تھا ہمیں مزید کسی سے اپنے حق کا تحفظ نہیں چاہیے اسلام میں جتنے خواتین کو حقوق دیے ہیں اُتنے کسی مذہب میں نہیں دیے گئے ۔۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -