بیٹی کا رشتہ نہ دینے پر قتل کرنے والے کو سزائے موت،2لاکھ روپے جرمانہ

بیٹی کا رشتہ نہ دینے پر قتل کرنے والے کو سزائے موت،2لاکھ روپے جرمانہ

  

لاہور(نامہ نگار)ایڈیشنل سیشن جج محمدحسنین قادرگلونے عبدالغفارقتل کیس میں ملوث مجرم محمد شعیب احمد کو سزائے موت اور 2 لاکھ روپے جرمانے کی سزا کا حکم سنا دیا ہے جبکہ مقدمہ می شریک خاتون سمیت 3ملزموں شک کافائدہ دیتے ہوئے بری کردیا ہے ۔عدالت میں تھانہ فیکٹری ایریا پولیس نے عبدالغفارقتل کیس میں اس کی بیوی نسیم اختر اور دیگر ملزمان محمد شعیب،حمزہ شہزاداور امان اللہ کے خلاف چالان پیش کررکھا تھا،ملزم شعیب پرالزام تھاکہ اس نے عبدالغفار کو بیٹی کا رشتہ نہ دینے پر گلہ دبا کر قتل کردیا تھا اس سازش میں مقتول کی بیوی نسیم اختر اور دیگر دو افراد بھی شامل تھے،عدالت میں چالان آنے پرفاضل جج نے باقاعدگی سے سماعت کی اورگزشتہ روز وکلاء و فریقین کے دلائل سننے کے بعد مجرم محمدشعیب پر جرم ثابت ہونے پر اسے سزائے موت اور دو لاکھ روپے جرمانے کی سزا سنا دی ۔

جبکہ دیگر تین ملزمان،نسیم اختر، حمزہ اور امان اللہ کو شک کا فائدہ دے کر بری کردیا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -