23مارچ کو پارٹی نام اور منشور کا اعلان کریں گے :انیس قائم خانی

23مارچ کو پارٹی نام اور منشور کا اعلان کریں گے :انیس قائم خانی

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر) متحدہ قومی موومنٹ کے منحرف رہنما انیس قائم خانی نے کہا ہے کہ گورنر سندھ اگر ہمارے ساتھ ہوتے تو وہ ہمارے آگے پیچھے نہیں بلکہ ہمارے درمیان ہوتے ۔ہر مرتبہ پریس کانفرنس کا یہ مطلب نہیں ہے کہ ہم کوئی وکٹ گرائیں گے ۔ہم پیر اور جمعرات کے علاوہ کسی اور روز بھی وکٹیں گرانے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔23مارچ کو اپنی پارٹی کے نام اور پارٹی منشور کا باضابطہ اعلان کرینگے ۔ ہماری پارٹی پورے پاکستان کی پارٹی ہوگی۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعہ کو ڈیفنس میں مصطفی کمال کی رہائش گاہ پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔اس موقع پر رضا ہارون اور وسیم آفتاب بھی موجود تھے ۔انیس احمد قائم خانی نے کہا کہ پورے ملک سے عوام ہم سے رابطہ کررہے ہیں اور یہ ہی صورتحال کراچی سمیت پورے سندھ کی ہے۔اگلے ہفتے حیدر�آبادکا دورہ کروں گا ۔حیدر�آباد میں پارٹی کا دفتر حاصل کرلیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ ہم پریس کانفرنس میں عوامی مسائل پر بھی گفتگو کریں گے اور سیاسی وکٹیں بھی گرائیں گے ۔ہر مرتبہ پریس کانفرنس کا یہ مطلب نہیں ہے کہ ہم کوئی وکٹ گرائیں گے ۔ہم پیر اور جمعرات کے علاوہ کسی اور روز بھی وکٹیں گرانے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔انیس قائم خانی نے کہا کہ ہم 23 مارچ کو اپنی پارٹی کے نام اور پارٹی منشور کا باضابطہ اعلان کرینگے ۔ہماری پارٹی پورے پاکستان کی پارٹی ہوگی۔انہوں نے کہا کہ اپریل کے وسط میں کراچی میں جلسہ کریں گے اور جلد ہی پورے پاکستان کا دورہ بھی کریں گے ۔ انہوں نے کہا کہ ہمارا فوکس عوام ہے اور ہم عوامی مسائل کو حل کرانے کی جدوجہد کرینگے ۔گورنر سندھ کے حوالے سے پوچھے گئے ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ گو رنر سندھ ڈاکٹر عشرت العباد سے ہمارا گزشتہ ڈھائی سال سے کوئی رابطہ نہیں ہے البتہ ہم انکا احترام کرتے ہیں کیونکہ گورنر سندھ نے کراچی سمیت سندھ کیلئے بڑے کام کئے ہیں۔گورنر سندھ اگر ہمارے ساتھ ہوتے تو وہ ہمارے آگے پیچھے نہیں بلکہ ہمارے درمیان ہوتے۔انہوں نے سندھ زبان میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میں سندھی زبان بولنے والوں کو بھی دعوت دیتا ہوں کہ وہ ہمارے قافلے میں شامل ہوں ۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -