بیٹے نے والد، شوہر کے ہاتھوں بیوی قتل، بھائیوں نے بہن کا چچا سسر مار ڈالا

بیٹے نے والد، شوہر کے ہاتھوں بیوی قتل، بھائیوں نے بہن کا چچا سسر مار ڈالا

  

سکندرآباد،دائرہ دین پناہ،ڈیرہ غازیخان،منچن آباد(نمائندگان)شوہر نے بیوی،بیٹے نے باپ،گھر لیجانے سے روکنے پر دلہن کے بھائیوں نے دلہا کے چچاکو موت کی گھاٹ اتار دیا،بدچلنی کے شبہ پر والد نے بیٹی کی گردن پر چھری چلادی،حالت تشویشناک،اس سلسلہ میں سکندرآبادسے (بقیہ نمبر15صفحہ12پر )

نمائندہ پاکستان کے مطابق ملتان کے رہائشی لیاقت نے صحافیوں کو بتایاکہ کہ گیارہ سال قبل اس کی بہن ثمینہ کی شادی سکندرآباد کے رہائشی محبوب عالم کے ساتھ ہوئی ثمینہ کے چار بچے ہیں محبوب عالم کے نازیہ کے ساتھ ناجائز تعلقات تھے گذشتہ روز محبوب عالم نے اپنی محبوبہ نازیہ کے ساتھ ملکر اپنی بیوی کو چائے میں زہر ملا کردے دیا جس کی حالت غیرہونے پر اسے نشتر ہسپتال ملتان منتقل کردیاسکندرآباد سے کسی رشتہ دار نے ثمینہ کے بھائی لیاقت کو فون کردیا جس پر لیاقت بھی نشترہسپتال پہنچ گیا جہاں پر ثمینہ زندگی کی آخری سانسیں لے رہی تھی ثمینہ نے اپنے بھائی لیاقت کو بتایاکہ اس کو اس کے شوہر اور اس کی محبوبہ نازیہ نے اسے راستے سے ہٹانے کے لیے زہر دیا ہے کچھ دیر بعد ثمینہ جاں بحق ہوگئی تھانہ سٹی پولیس نے ثمینہ کے بھائی لیاقت کی درخواست پر محبوب عالم اور نازیہ کے خلاف دفعہ 302کے تحت قتل کا مقدمہ درج کرلیا اور نعش پوسٹ مارٹم کے لیے سول ہسپتال منتقل کردی تاہم آخری اطلاع تک کوئی گرفتاری عمل میں نہ آسکی۔دائرہ دین پناہسے نمائندہ خصوصی کے مطابق نواحی چاہ گوال والا کے رہائشی محمد رمضان جوئیہ نے اپنی جواں سال بیٹی زبیدہ کو رات کے وقت کسی نوجوان کے ساتھ غیر حالت میں دیکھ لیاتو اُسے بالوں سے پکڑ کر گھسیٹتاہوا گھر لے آیا اور چھری اُٹھا کر زبیدہ کی گردن پر چلادی لڑکی کی چیخوپکار پر اسکی والدہ اور بہن نیلم نے بمشکل چھڑایا اس وقت لڑکی خون بہہ جانے سے بے ہوش تھی تواسے فوری نشتر ہسپتال پہنچادیا گیا۔ جہاں اس کی حالت نازک بتائی جاتی ہے۔ڈیرہ غازی خان سے نمائندہ خصوصی کے مطابق شہزاد کالونی کے رہائشی محمد راشد کی ایک ہفتہ قبل تھانہ گدائی کے علاقہ بستی باڑا میں شکیل وغیرہ کی بہن سے شادی ہوئی ، گذشتہ روز وہ اپنے سسرال میں موجود تھی کہ اسے اپنی والدہ کے ہاں ایک اور بیٹے کی پیدائش کی اطلاع ملی ، جس پر اس کے بھائی محمد شکیل ، محمد حبیب ، مرید حسین اور مجید وغیرہ اسے اپنے گھر لے جانے کیلئے بہن کے سسرال چلے آئے جہاں بہنوئی محمد ارشد کے گھر پر موجود نہ ہونے کے باوجود انہوں نے اپنی بہن سے ساتھ چلنے کو کہا جس پر وہ راضی ہوگئی اور اپنے شوہر سے اجازت لیے بغیر بھائیوں کیساتھ میکے جانے لگی تو موقع پر موجود اس کے شوہر ارشد کے چچا غلام محمد باڑا نے اسے روکا اور کہا کہ ارشدکی اجازت کے بغیر دلہن کو گھر جانے کی کسی صورت اجازت نہیں دے سکتا جس پر نو بیاہتا دلہن کے بھائی طیش میں آگئے اور انہوں نے پہلے گالی گلوچ شروع کردی بعد ازاں گھر میں پڑے ڈنڈوں سے غلام محمد پر حملہ کردیا اور ملزمان نے سوٹوں کے وار کر کے غلام محمد باڑا کو قتل کر دیا جبکہ دو افراد زخمی ہوگئے ، غلام محمد باڑا کی ہلاکت پر ملزمان وہاں سے فرار ہوگئے ، واقعہ کی اطلاع پر گدائی پولیس موقع پر پہنچ کر نعش پوسٹمارٹم کیلئے DHQہسپتال بھجوا دی اور محمد راشد کے تحریری بیان پر ملزمان کیخلاف قتل کی زیر دفعہ 302کے تحت مقدمہ درج کرلیا ۔ منچن آباد سیتحصیل رپورٹرکے مطابق منچن آباد طارق کالونی خدا بخش نامی شخص نے اپنی جائیداد تین بیٹوں میں سے د و بیٹوں کے نام کردی جس کا تیسرے بیٹے محمد امین کو رنج تھا جس نے تیز دھار آلہ کے وار کرکے اپنے باپ کو موقع پر ہلاک کر ڈالا ۔ قتل کرنے کے بعد وہ موقع سے فرار ہونے میں کامیاب ہوگیا ،وقوعہ کی اطلاع ملتے ہی ایس ایچ او تھانہ منچن آباد پرویز اختر جتوئی موقع پر پہنچ گئے اور نعش پوسٹ مارٹم کے بعد ورثاء کے حوالے کر دی، منچن آباد پولیس نے مقدمہ درج کرکے ملزم کی تلاش کیلئے چھاپے مارنا شروع کردئیے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -