دوسرا آپشن نامنظور،ہم بہاولپور صوبے کی بحالی چاہتے ہیں،آسیہ کامل

دوسرا آپشن نامنظور،ہم بہاولپور صوبے کی بحالی چاہتے ہیں،آسیہ کامل

  

نور پور نورنگا(نمائندہ پاکستان)آج ہو یا کل بحثیت ریاست کے باسی بہاولپور صوبے کی بحالی چاہتے ہیں اور جو سیاسی پارٹی اس کو عملی جامہ پہنائے گی اس کا نام سنہرے(بقیہ نمبر20صفحہ12پر)

حروف میں لکھا جائے گا۔ ان خیالات کا اظہار چیئر مین صوبہ بہاولپور اتحاد مسز آسیہ کامل نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ اگر ملتان کو 1818ء والی پوزیشن پر بحال کرنا ہے تو بہاولپور کی عوام کو کوئی اعتراض نہیں ہے لیکن 1818ء میں بہاولپور نہ تو ملتا ن کا حصہ تھا اور نہ ہم اب مانیں گے۔ بہاولپور کی الگ شناخت 1725سے 1955تک بحثیت ایک ریاست کے رہی ہے۔ قیام پاکستان کے بعد 1951سے 1955تک بہاولپور پاکستان کا فاضل بجٹ دینے والا صوبہ رہا ہے جس کی اپنی اسمبلی وزیر اعلی،ہائی کورٹ اور پبلک سروس کمیشن ملتان یا پنجاب کا حصہ نہیں تھا۔ ملتان والوں کو سیاسی اختلافات ومفادات سے بالاتر ہو کربہاولپور صوبہ کو تسلیم کر تے ہوئے اپنے صوبہ کے قیام کے لیے جدوجہد کرنی چاہیے۔

آسیہ کامل

مزید :

ملتان صفحہ آخر -