کرونا وائرس: ڈی ایچ کیو ہسپتال وہاڑی میں آئسولیشن وارڈ قائم شہری خوفزدہ،انتظامیہ کیخلاف احتجاج

کرونا وائرس: ڈی ایچ کیو ہسپتال وہاڑی میں آئسولیشن وارڈ قائم شہری ...

  

وہاڑی(بیورورپورٹ+نمائندہ خصوصی) ضلعی انتظامیہ اور ہسپتال انتظامیہ کی کورونا وائرس سے بچاو کے حوالے سے مجرمانہ غفلت دیکھنے میں آئی ہے انتظامیہ نے خطرناک(بقیہ نمبر25صفحہ12پر)

وائرس کا علاج کرنے کیلئے ڈی ایچ کیو ہسپتال کے ڈائیلسز وارڈ کے اوپر موجود برانڈوسکوپی وارڈ کے ایک حصہ میں آئسولیشن وارڈ قائم کردیا شہریوں شیخ عبدالرحمان,غلام عباس,شیخ عبدالستار چھٹا, رانا مقبول, مقصود, احمد,اذان,ارتضی, عمر, زوہیب, شہزاد,محبوب,بدر,مزمل,اویس ودیگر نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ خطرناک مرض کرونا سے بچاو کیلئے آئسولیشن وارڈز شہر سے باہر بیسک ہیلتھ یونٹ کو خالی کروا کر بنانا چاہیے اگر ایسا ممکن نہیں تو کم ازکم ہسپتال کے دیگر وارڈز سے باہر بنائے جانے چاہئیں مگر انتظامیہ نے سنگین غفلت کامظاہرہ کرتے ہوئے انتہائی نگہداشت کے وارڈ ڈائیلسز اور برانکو سکوپی جہاں چیسٹ کینسر کے مریض بھی موجود ہوتے ہیں کے اندر آئسولیشن وارڈ قائم کیا ہے جہاں کورونا سے متاثرہ مریض کو لانے لے جانے کے دوران دیگر مریضوں،عملہ ہسپتال سمیت لواحقین کو بھی مرض لاحق ہونے کا خدشہ ہے وزیراعظم پاکستان،وزیر اعلی پنجاب معاملہ کا فوری نوٹس لے کر آئسولیشن وارڈ کو ہسپتال سے الگ کریں تاکہ دیگر شہری اس موذی مرض سے محفوظ رہ سکیں آئسولیشن وارڈ کے حوالہ سے ایم ایس ڈی ایچ کیو ہسپتال نے گول مول جواب دیتے ہوئے کہا کہ انہوں نے 3 آئسولیشن روم بنا دیئے ہیں جہاں تمام سہولیات موجود ہیں لیکن وہ رومز بھی گائنی وارڈ کا حصہ ہیں باوثوق ذرائع کے مطابق آفیسر کالونی کے رہائشی ایران سے تفتان منتقل ہونے والے مقامی ڈاکٹر عذرا کے دو کزنز جس میں ایک مرد اور عورت شامل ہیں میں کورونا پازیٹو پایا گیا ہے اور اگلے دو دن تک ان کی وہاڑی منتقلی متوقع ہے ان کی آمد وہاڑی کے شہریوں کیلئے انتہائی خطرناک ثابت ہوسکتی ہے لہذا انتظامیہ کو ہوش کرکے فوری طور پر عملی اقدامات کرنے ہوں گے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -