صوابی،مصطفی کمال ایڈوکیٹ کا بھائی قاتلانہ حملہ میں جاں بحق،بیٹا زخمی

صوابی،مصطفی کمال ایڈوکیٹ کا بھائی قاتلانہ حملہ میں جاں بحق،بیٹا زخمی

  

صوابی(بیورورپورٹ)موضع کڈی میں پرانی دشمنی کی بناء پر ممتاز قانون دان مصطفی کمال ایڈوکیٹ کے بڑے بھائی محمد اقبال موٹر سائیکل سواروں کی فائرنگ سے جاں بحق ہو گیا۔ جب کہ فائرنگ سے مقتول کا بیٹا شدید زخمی ہو گیا منور اقبال سکنہ کڈی نے تھانہ زیدہ میں ایف آئی آر درج کراتے ہوئے بتایا کہ وہ موٹر سائیکل پر اپنے والد محمد اقبال کے ہمراہ گاؤں موضع کڈی جارہے تھے کہ راستے میں بدری نالہ روڈ زیدہ کے مقام پر دو نامعلوم موٹر سائیکل سواروں نے عبدالعزیز سکنہ کڈی کی ایماء پر ان پر فائرنگ شروع کر دی جس کے نتیجے میں وہ اپنے باپ سمیت شدید زخمی ہو گئے نامعلوم ملزمان نے عبدالعزیز سکنہ کڈی کی ایماء پر فائرنگ کی مجروحین کو باچا خان میڈیکل کمپلیکس شاہ منصور اور بعد ازاں پشاور منتقل کر دیا گیا۔ شدید مجروح محمد اقبال زخموں کی تاب نہ لا کر بدھ کی علی الصبح چل بسے۔ وجہ قتل پرانی دشمنی بیان کی ہے زیدہ پولیس نے مجروح منو ر اقبال کی رپورٹ پر مبینہ ملزمان عبدالعزیز سمیت دو نامعلوم ملزمان کے خلاف ایف آئی آر درج کر کے تفتیش شروع کر دی ہے۔ مقتول محمد اقبال ممتاز قانون دان مصطفی کمال ایڈوکیٹ، سابق ہیڈ ٹیچر محمد فاروق خان، تجمل الحسین اور محمد طارق خان کے بڑے بھائی جب کہ جاوید اقبال، منور اقبال اور تنویراقبال کے والد، شہنشا خان ایڈوکیٹ، سلمان خان، سہراب خان اور منیر خان کے ماموں تھے۔مقتول کو بدھ کی شام اپنے آبائی قبر ستان موضع کڈی میں سپرد خاک کر دیا گیا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -