’’جانو آئی ایم اِن صحافیوں کے گھیرے میں‘‘معروف خطیب مولانا ناصر مدنی نے تشدد کرنے والے ملزموں کے ’سفارشیوں‘ کے نام بڑا پیغام جاری کر دیا

’’جانو آئی ایم اِن صحافیوں کے گھیرے میں‘‘معروف خطیب مولانا ناصر مدنی نے ...
’’جانو آئی ایم اِن صحافیوں کے گھیرے میں‘‘معروف خطیب مولانا ناصر مدنی نے تشدد کرنے والے ملزموں کے ’سفارشیوں‘ کے نام بڑا پیغام جاری کر دیا

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)معروف عالمی شہرت یافتہ خطیب اور حال ہی میں تشدد کا نشانہ بننے والے عالم دین علامہ مولانا ناصر مدنی نے کہا ہے کہ اگر کسی نے میرے کیس کو کمزور کرنے کی سازش کی تو روز قیامت اللہ کی عدالت میں اُسے جواب دینا پڑے گا ،تشدد ،دھونس اور جبر کے ذریعے حق کی آواز کو دبانے والے اپنے مذموم مقاصد میں ناکام ہوں گے ’’جانو آئی ایم اِن صحافیوں کے گھیرے میں‘‘ ۔

تفصیلات کے مطابق اپنی رہائش گاہ پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے علامہ مولانا ناصر مدنی نے کہا کہ جن لوگوں نے میری آواز کو خاموش کرانا چاہا تھا اللہ کے فضل سے وہ قانون کی گرفت میں آ چکے ہیں ،مجھے امید ہے کہ ہمارے ملکی ادارے ان سفاک مجرموں کو نشان عبرت بنا دیں گے تاکہ آئندہ کوئی ایسی جرأت نہ کرے ۔انہوں نے کہا کہ میں پیغام دینا چاہتا ہوں کہ جو لوگ میرے ملزموں کے بارے میں کسی پر بھی دباؤ یا سفارش کرنا چاہتے ہیں تو وہ جان لیں کہ اگر اللہ نے کسی کو عہدہ یا عزت دی ہے اور وہ اس عہدے کا ناجائز فائدہ اٹھاتے ہوئے میرے ملزموں کو چھڑانا چاہتے ہیں تو وہ جان لیں کہ اگر کسی نے ملزموں کو چھڑانے کی کوشش کی تو میں اللہ کے دربار میں اس کا گریبان پکڑوں گا اور انہیں کسی صورت معاف نہیں کروں گا،مجھے امید ہے کہ اعلیٰ ادارےکسی سفارش اور دباؤ کے نتیجے میں میرے ملزموں کو رہا نہیں کریں گے ۔علامہ ناصر مدنی نے اپنے روائتی انداز میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ’’جانو آئی ایم اِن صحافیوں کے گھیرے میں‘‘ جب تک میری زندگی باقی ہے میں دین کی خدمت کرتا رہوں گا اور میرے مرنے کے بعد بھی تقریروں کی صورت میں میری آواز گونجتی رہے گی ۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -