شوہر سے دوستی پر پولیو ورکر نے اپنی ساتھی کو قتل کرادیا

شوہر سے دوستی پر پولیو ورکر نے اپنی ساتھی کو قتل کرادیا
شوہر سے دوستی پر پولیو ورکر نے اپنی ساتھی کو قتل کرادیا

  

پشاور (ویب ڈیسک ) داؤد زئی میں ڈیوٹی ختم کرکے گھر جاتی پولیو خاتون ورکر کے قتل کی تفتیش میں پولیس کو اہم کامیابی مل گئی اور  مقتولہ کو  اس کی ساتھی خاتون ورکر نے شوہر کے ساتھ مبینہ دوستی کی وجہ سے قتل کرایا، پولیس نے پولیو خاتون ورکر کو قتل کرنے والے ملزم کو گرفتار کرلیا ، معلوم ہوا ہے کہ اسے اس کی ساتھی ورکر نے قتل کرایا۔

"ایکسپریس نیوز" کے مطابق ہیلتھ ورکر کو ساتھی خاتون نے شوہر کے ساتھ مبینہ دوستی کی وجہ سے قتل کرایا۔ مقتولہ (ا) کی والدہ نے مقتولہ کے سابقہ منگیتر پر دعوے داری کی تھی تاہم جامع تفتیش کے دوران سابقہ منگیتر نامزد ملزم سیف اللہ بے گناہ ثابت ہوا۔

ایس ایس پی آپریشن ہارون رشید نے بتایا کہ جدید سائنسی خطوط پر تفتیش کے دوران ملوث ملزمان بے نقاب ہوئے اور  پولیس نے ملوث 3 ملزمان مسماۃ (ز)، جواد اور سمیع اللہ کو گرفتار کرلیا۔ابتدائی تفتیش کے مطابق  خاتون کی  ملزمہ کے شوہر سے مقتولہ کی دوستی تھی جس کا ملزمہ کو رنج تھا اور ملزمہ نے خاتون ورکر کو قتل کرانے کا پروگرام بنایا جس کے لیے اس نے5 لاکھ روپے کے عوض اجرتی قاتل کو ہائر کیا۔

ملزمہ کی دوسری بہن نے اجرتی قاتلوں کو ادائیگی کی ہامی بھری، ملزمہ نے مقتولہ کی سابقہ منگنی سے فائدہ اٹھانے کی بھی کوشش کی جس کے بعد لیڈی ہیلتھ ورکر کو قتل کرنے کا الزام سابقہ منگیتر پر لگنا فطری عمل تھا۔خاتون ملزمہ نے اجرتی قاتل کو مقتولہ کی آمد و روانگی سمیت دیگر اہم معلومات فراہم کی تھیں۔

مزید :

جرم و انصاف -