گلشن راوی اتوار بازار ،گلی سڑی سبزیاں مہنگے داموں فروخت

گلشن راوی اتوار بازار ،گلی سڑی سبزیاں مہنگے داموں فروخت

                                                                           لاہور ( اسد اقبال )ضلعی حکو مت کے زیر اہتما م صو با ئی دارالحکو مت میں لگائے جانے والے سستے اتوار بازار صرف نام کے سستے بازار رہ گئے ہیں جہاں پر مارکیٹ کمیٹی کی جانب سے جاری کر دہ سبز یو ں وپھلو ں کے سر کاری نر خ لا گو ہو نے کے باو جو د صارفین کو مہنگے دامو ں اشیاءکی خر ید کا سا منا ہے جبکہ متعلقہ ٹاﺅ نز کو انتظا مات کی ذمہ داری سو نپنے کے باوجو د شہر یو ں کو کئی ایک مسائل کا سا منا ہے روزنا مہ پاکستان کی جانب سے گز شتہ روز کیے گئے گلشن راوی اتو ار بازار سروے میں مارکیٹ کمیٹی کی آشیر باد سے درجہ سوئم کی گلی سڑی سبزیاں درجہ اول کی قیمت پر فروخت، سٹال ہو لڈرز کا صارفین سے ناروارویہ،سیکو رٹی کا فقدان،لوٹ مار کا بازار گرم اور زمین پر لگے اشیاءکے سٹالز ضلعی حکو مت کا منہ چڑ ھاتا دکھائی دیے۔علا وہ ازیں خواتین کو آوارہ لڑکوں کی جانب سے پر یشانی کا سامنا رہا خر یداری کرنے آئی ہو ئیںارم ارشاد،اقرائ،سدرہ،بشری اور مسز ارشاد نے کہا کہ یہاں پر بازار والی قیمت پر اشیاءکی فر وخت ہو رہی ہے صارف کو کسی قسم کا ریلیف میسر نہیںاور گندگی میں لگے سٹالز عجب منظر پیش کر رہے ہیں انھو ں نے کہا کہ روٹی کپڑا مکان اور خادم اعلی پنجاب کا سہرا سجانے والی حکو متو ں نے مہنگائی کے گراف کو جس قدر بلند کیا ہے اس کی مثال ما ضی میں نہیں ملتی کیو نکہ غر یب چھو ٹی چھو ٹی خو شیو ں سے محرو م ہو کر رہ گیا ہے ماہ نو ر اور کا مران نے کہا کہ عوام کو ریلیف دینے کے وعدے جھو ٹ کے مترا دف ثابت ہو ئے اتو ار بازاروں کا شمار مہنگے باز ارو ں میں ہو تا ہے جہاں پر مقررہ نرخ سے زائد پر اشیاءکی فر و خت انتظا میہ کی مو جو دگی میں ہو رہی ہے اور سٹال ہو لڈرز کا رویہ نا قا بل بر داشت ہے صائمہ ،فرح اور شکیلہ نے کہا کہ ضلعی حکو مت نے اتو ار بازاروں کا انعقاد عوام کو بے وقوف بنانے کے لیے کیا ہے جہا ںپر فروخت ہو نے والی اشیا کی قیمتیں عا م مارکیٹ کے تنا سب سے یکساں جبکہ کو الٹی غیر تسلی بخش ہے انھو ں نے کہا کہ غر یب مہنگائی کی دلدل میں پھنس چکا ہے فا قہ کشی گھر وں میں دندناتی پھر رہی ہے رابعہ اور ریحا نہ نے کہا کہ یہا ں پر چیک اینڈ بیلنس نہ ہو نے سے سٹال ہو لڈرز گلی سڑی سبزیا ں و پھل در جہ اول کی قیمت پر فر وخت کر رہے ہیںجن کو پو چھنے والا کو ئی نہیںجبکہ اوباش انتظامیہ اور لڑکو ں کی وجہ سے نہایت پر یشا نی کا سامنا خواتین کو اٹھا نا پڑتا ہے صارفین نے ڈی سی او سے اپیل کی ہے کہ اتوار با زارو ں کی حالت زار بہتر بنانے کے لیے اقدامات کرے جبکہ پو لیس اہلکاروں کو بھی چاہیے کہ اتوار بازار میں سیکیو رٹی کے فرائض احسن طر یقہ سے سر انجا م دیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1