تحریک انصاف ناکام ہو چکی،عمران خان پشاور میں کسی کو منہ دکھانے کے قابل نہیں ،پرویز رشید

تحریک انصاف ناکام ہو چکی،عمران خان پشاور میں کسی کو منہ دکھانے کے قابل نہیں ...

                             اسلام آباد ( اے این این )وزیراطلاعات ونشریات سینیٹرپرویزرشید نے کہاہے کہ پاکستان میں کوئی تنازعہ نہیں ، تحریک انصاف مکمل طورپر ناکام ہوچکی ، عمران خان پشاور میں کسی کو منہ دکھانے کے قابل نہیں اسی لئے لاہور اور اسلام آباد میں احتجاج کرکے لوگوں کو بے وقوف بنا نے رہے ہیں، میڈیا آزادی کو ذمہ داری کے ساتھ استعمال کر ے یہی وقت کاتقاضا ہے، پاکستان میں سٹریٹ جسٹس کا رواج نہیں ہونا چاہیے،خود ہی مدعی، وکیل اور منصف بن کر فیصلے کرنے کااختیارکسی کوئی نہیں، اس وقت کیبل آپریٹرز کا وطیرہ بالکل غلط ہے انہیں کسی چینل کو کھولنے یا بند کرنے کا اختیارحاصل نہیں ۔ صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے پرویز رشید نے کہا کہ صحافیوں کا تحفظ حکومت کا فرض ہے لیکن میڈیا کو بھی اپنی ذمہ داری کا احساس کرنا چاہیے، آزادی کو ذمہ داری کے ساتھ استعمال کرنا وقت کی ضرورت ہے، آزادی کو بندر کے استرے کی طرح استعمال نہیں کرنا چاہیے، اس شاخ کو نہ کاٹا جائے جس پر ہم سب بیٹھے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت جیو کے معاملے پر تبصرہ کرنا مناسب نہیں ، میں کوئی بات کروں گا تو وہ پیمرا کے کام میں مداخلت ہوگی، ہم کسی کے کام میں مداخلت نہیں کرنا چاہتے انصاف کی فراہمی اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کو غیر جانبدار اور صاف شفاف ہونا چاہیے تاکہ وہ ہر قسم کے اثرورسوخ سے آزاد ہو اور ان پر سب کا اعتماد ہو۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم نے ایک کمیٹی بنا دی ہے جو شکایات کے ازالے اور قانون کی خلاف و رزی کو روکنے کیلئے موثر نظام وضع کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ کسی کو اختیار نہیں ہے کہ وہ خود ہی مدعی، وکیل اور منصف بن کر فیصلے کرناشروع کردے۔ پاکستان میں سٹریٹ جسٹس کا رواج نہیں ہونا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت کیبل آپریٹرز کا وطیرہ بالکل غلط ہے انہیں کسی چینل کو کھولنے یا بند کرنے کا اختیار نہیں ہے، کیبل آپریٹرز قانون اپنے ہاتھ میں لے رہے ہیں انہیں صرف اپنی قانونی ذمہ داریاں پوری کرنی چاہیے، کیبل آپریٹرز عدالت کا اختیار نہیں رکھتے انہیں کسی کو سزا یا جزا دینے کا حق نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہماری حکومت ماضی کی حکومتوں کی طرح کام نہیں کرنا چاہتی ہم بات چیت، افہام وتفہیم اور پیار محبت کے ساتھ معاملات کو حل کرنا چاہتے ہیں تاکہ لوڈشیڈنگ اور مہنگائی جیسے اصل مسائل پر توجہ دی جاسکے۔ کیبل آپریٹرز لاقانونیت کا راستہ اختیار نہ کریں وہ اپنا کام کریں اور دوسروں کو ان کا کام کرنے دیں۔ انہوں نے کہا کہ میری صرف جنگ گروپ انتظامیہ سے نہیں تمام میڈیا ہاﺅسز کے لوگوں سے ملاقاتیں ہوئی ہیں سب کی بات سننا میرا فرض ہے میں اپنا فرض کسی سے چھپ کر ادا نہیں کررہا نہ کوئی غیر قانونی کام کررہا ہوں۔ اس معاملے کو غلط مطلب پہنانے کی کوشش کرنیوالوں کو کامیابی نصیب نہیں ہوگی، میرے کردار سے پوری قوم واقف ہے، قوم کو تقسیم نہ کیا جائے۔ پرویز رشید نے کہا کہ 11ماہ میں وزیراعظم سمیت ہم سب کے بارے میں بہت کچھ کہا گیا،مزاحیہ پروگرام بنا کر بلا جواز تنقید کی گئی لیکن ہم نے کسی میڈیا گروپ پر پابندی لگائی نہ کوئی دھمکی دی ہے، ہم نے صحافیوں کو اور ان کی آزادی کو تحفظ فراہم کیا ہے۔ میڈیا کو بھی چاہیے کہ وہ اپنی آزادی کا تحفظ کرے اور خود کو نقصان نہ پہنچائے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ اس وقت ملک میں کوئی تنازعہ نہیں ہے ، تحریک انصاف مکمل طورپر ناکام ہوچکی ہے۔ عمران خان کو چاہیے تھا کہ وہ پشاور میں جلسہ کرکے لوگوں کو اپنی حکومت کی کارکردگی سے آگاہ کرتے لیکن وہ پشاور میں منہ دکھانے کے قابل نہیں ہیں اس لئے لاہور اور اسلام آباد میں احتجاج کرکے لوگوں کو بے وقوف بنا رہے ہیں۔

مزید : صفحہ اول