پاک فوج سے اظہار یکجہتی کی حکومتی قرار داد پنجاب اسمبلی میں منظور

پاک فوج سے اظہار یکجہتی کی حکومتی قرار داد پنجاب اسمبلی میں منظور
پاک فوج سے اظہار یکجہتی کی حکومتی قرار داد پنجاب اسمبلی میں منظور

  

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) پاک فوج سے اظہار یکجہتی کے لئے پیش کی جانے والی حکومتی قرار داد پنجاب اسمبلی میں کثرت رائے سے منطور کر لی گئی ہے ۔ قرارداد میں کہا گیا ہے کہ پاک فوج کا کردار قابل تحسین ہے، فوج سمیت حکومتی اداروں کو متنازع بنانے کی کوششوں کی مذمت کرتے ہیں۔ اس سے قبل پنجاب اسمبلی کے اجلاس میں فوج کے حق میں قرارداد پیش کرنے کی اجازت نہ ملنے پر مسلم لیگ (ق) اور اپوزیشن جماعتوں نے واک آوٹ کیا ۔ پنجاب اسمبلی کا اجلاس ڈپٹی سپیکر علی شیر گورچانی کی زیر صدارت ہوا جس میں مسلم لیگ (ق) کے پارلیمانی لیڈر مونس الٰہی نے سپیکر سے بولنے کی اجازت طلب کی تو انہیں کہا گیا کہ وہ وقفہ سوالات کے بعد قرارداد لائیں۔وقفہ سوالات کے بعد مونس الٰہی نے قرارداد پیش کرنی چاہی تو سپیکر نے کہا کہ انہیں قرارداد کی کاپی نہیں ملی اس لئے انہیں بولنے کی اجازت نہیں دی گئی، جس پر اپوزیشن ارکان بنچوں پر کھڑے ہو گئے لیکن پھر بھی قائم مقام سپیکر نے کوئی توجہ نہ دی تو اپوزیشن نے اسمبلی سے واک آوٹ کردیا۔ اپوزیشن لیڈر میاں محمود الرشید نے کہا کہ اپوزیشن نے مونس الٰہی سے اظہار یکجہتی کیلئے واک آوٹ کیا ہے۔ مسلم لیگ (ن) فوج کے حق میں بیانات دیتی ہے تو قرارداد پیش کرنے میں کیا حرج ہے۔ پاک فوج کی عزت ہر پاکستانی کے دل میں ہے۔

مزید : لاہور /اہم خبریں