’’عدالت جانا ہے تو پیسے دو‘‘ قیدی نے جیل انتظامیہ کی پول کھول دی

’’عدالت جانا ہے تو پیسے دو‘‘ قیدی نے جیل انتظامیہ کی پول کھول دی
 ’’عدالت جانا ہے تو پیسے دو‘‘ قیدی نے جیل انتظامیہ کی پول کھول دی

  

کراچی(ویب ڈیسک)  ’’عدالت جانا ہے تو پیسے دو‘‘ قیدی نے جیل انتظامیہ کی پول کھول دی۔

ایکسپریس نیوز کے مطابق سٹی کورٹ میں پیشی پرآئے قیدی ملک ناصر نے بتایا کہ جیل حکام نے رشوت کا بازار گرم کررکھا ہے ، جیل کی انتظامیہ ہر پیشی پر مجھ سے رقم کا مطالبہ کرتی ہے، قیدی نے بتایاکہ جیل میں جو پیسے دیتا ہے اسے تمام سہولتیں اورآسائشیں فراہم کی جاتی ہیں اورجو رقم نہیں دیتا اس پر سختی کی جاتی ہے۔قیدی نے کلرک فاروق چانڈیو اور ذوالفقار کے خلاف عدالت میں درخواست بھی دے دی جس میں کہاگیا ہے کہ دونوں نے 10 ہزار روپے کا مطالبہ کیا ہے اور رقم نہ دینے کی صورت میں مجھے مارنے اور گھر والوں کو بھی جیل میں بند کرنے کی دھمکی دی ہے، عدالت سے اپیل ہے کہ وہ مجھے انصاف فراہم کرے اور کرپٹ جیل اہلکاروں کے خلاف کارروائی کی جائے ۔

مزید : جرم و انصاف