جزوی لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی پر ابتک 28ہزار475 مقدمات درج

جزوی لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی پر ابتک 28ہزار475 مقدمات درج

  

لا ہور (کر ائم رپو رٹر)انسپکٹر جنرل پولیس پنجاب شعیب دستگیر کے احکامات پر صوبے کے تمام اضلاع میں پولیس ٹیمیں ذخیرہ اندوزی ایکٹ اورکے متعلق حکومت پنجاب کی جانب سے جاری کی گئی ہدایات پر سختی سے عمل درآمد کروارہی ہے تاکہ وبائی وائرس کورونا کے پھیلاؤ کو کم سے کم کرکے شہریوں کی قیمتی جانوں کو ہر ممکن تحفظ فراہم کیا جاسکے۔ اس سلسلے میں پولیس ٹیمیں قرنطینہ سنٹرز پر کورونا وائرس کے خلاف ڈاکٹرز کے ہمراہ فرنٹ لائن پر مصروف عمل ہیں۔

جبکہ ضلعی پولیس سربراہان کی زیر نگرانی پولیس ٹیمیں محکمہ صحت اور دیگر سرکاری اداروں کے ساتھ مل کر کورونا وائرس سے بچاؤ کیلئے اقدامات میں مصروف ہیں اورساتھ ہی ذخیری اندوزی ایکٹ کے تحت ضروری سامان و اشیاء مہنگے داموں فروخت کرنے والے سفاک ذخیرہ اندوزوں کے خلاف بلا تاخیر قانونی کاروائی کویقینی بنایا جا رہا ہے۔تفصیلات کے مطابق پولیس ٹیموں نے 16مارچ سے شروع آپریشن میں صوبے بھر میں 904ناکے لگائے ہیں جہاں اب تک 289527گاڑیوں،681883موٹر سائیکلوں اور1361120شہریوں کو چیک کیا گیا ہے۔ 820565شہریوں کو وارننگ دی گئی، 54482سے سیکیورٹی بانڈزلئے گئے جبکہ دفعہ144کی خلاف ورزی پر28475ایف آئی آرز درج کرتے ہوئے27860شہری گرفتاراور27941شہری ضمانت پر رہا ہوئے جبکہ قانون کی خلاف ورزی پر5795دوکانوں اور256ریستورانوں کے خلاف کاروائی بھی عمل میں لائی گئی۔گزشتہ روزبھی صوبہ بھر میں 904 ناکے لگائے گئے جہاں 4199گاڑیوں اور10775موٹر سا ئیکلوں کو چیک کیاگیا۔پولیس ناکوں پرچیک کئے گئے 19265شہریوں میں سے11001کو وارننگ دے کر چھوڑا گیا۔ 501شہریوں سے سیکیورٹی بونڈز لئے گئے،314ملزمان گرفتا ر ہوئے جبکہ218نے ضمانتیں کروائیں۔مجموعی طور پر384ایف آئی آر درج کی گئیں جن میں 532ملزمان کو نامزد کیا گیاجبکہ اسی دوران قانون کی خلاف ورزی پر170دوکانوں اور 01ریستورنٹ کے خلاف قانونی کاروائی بھی عمل میں لائی گئی۔

مزید :

علاقائی -