سندھ حکومت آئندہ بجٹ میں صحت پر سب سے زیادہ خرچ کریگی،ناصر شاہ

سندھ حکومت آئندہ بجٹ میں صحت پر سب سے زیادہ خرچ کریگی،ناصر شاہ

  

کراچی(این این آئی) صوبائی وزیر اطلاعات، بلدیات، جنگلات وجنگلی حیات و مذہبی امور سید ناصر حسین شاہ نے کہا ہے کہ کورونا وائرس سے نمٹنے کے لئے سندھ نے بہت کام کیا ہے لیکن ابھی بہت سارا کام باقی ہے، کیونکہ اس وائرس کے بعد سے بہت ساری چیزیں سامنے آئی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے خاص طور پر وزیر اعلیٰ سندھ کو ہدایت کی ہے کہ اب جو بجٹ آئے گا اس میں سب سے زیادہ فوکس صحت کے شعبہ پر کیا جائے اور زیادہ سے زیادہ اس پر کام کیا جائے تاکہ عوام کو اس مشکل وقت میں زیادہ سے زیادہ سہولتیں فراہم کی جاسکیں۔ سید ناصر حسین شاہ نے کہا کہ موجودہ صورتحال میں سندھ اور وفاق کو ٹیکسز کی مد میں آمدنی میں کمی کا سامنا ہے اس لئے تنخواہوں کے علاوہ سب سے زیادہ توجہ صحت کے شعبہ پر ہے اور آنے والے بجٹ میں بھی یہی حکمت عملی رکھی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ صحت کے شعبہ میں جو اعدادو شمار بتائے جارہے ہیں وہ درست نہیں ہیں بلکہ مجموعی طور پر بجٹ کا زیادہ تر حصہ تنخواہوں کی مد میں صرف ہوتا ہے۔ سید ناصر حسین شاہ نے کہا کہ کہ کینسر کے علاج کے لئے سائبر روبوٹ نائف کے نام سے جناح ہسپتال میں جو شعبہ قائم کیا گیا وہ پاکستان میں اپنی نوعیت کا واحد ادارہ ہے، مریض سے ایک پیسہ بھی نہیں لیا جاتا۔ اس میں سندھ حکومت اور ڈونرز کی مدد سے مریضوں کا مفت علاج کیا جاتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج سندھ کے کونے کونے میں ڈاکٹرز موجود ہیں۔ اس وقت سکھر میں کینسر کا ایک بڑاہسپتال بن رہا ہے،ہسپتالوں کی مکمل فنڈنگ سندھ حکومت نے کی ہے۔

صحت پر خرچ

مزید :

صفحہ آخر -