سندھ حکومت نے تنخواہوں میں 15فیصد اضافے کی منظوری کے احکامات جاری کر دیئے: وسیم اختر

سندھ حکومت نے تنخواہوں میں 15فیصد اضافے کی منظوری کے احکامات جاری کر دیئے: ...

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر) میئر کراچی وسیم اختر نے بلدیہ عظمیٰ کراچی کے تمام ملازمین کی تنخواہوں میں بجٹ کے موقع پر حکومت سندھ کی جانب سے کئے گئے پندرہ فیصد اضافے کی منظوری دیتے ہوئے احکامات جاری کئے ہیں کہ کے ایم سی کے تمام ملازمین، اسپتالوں کے ڈاکٹرز، پیرامیڈیکل اسٹاف، فائر بریگیڈ، میونسپل سروسز، پارکس اور دیگر تمام محکموں کی مئی کی ایڈوانس تنخواہ کے ساتھ پندرہ فیصد اضافے کو بھی شامل کیا جائے، یہ تنخواہیں تمام ملازمین کو عید سے قبل لازمی طور پر ادا کرنے کا بھی فیصلہ کیا گیاہے، پیر کے روز میئر کراچی وسیم اختر کی صدارت میں اجلاس منعقد ہوا جس میں ڈپٹی میئر کراچی سید ارشد حسن، میٹروپولیٹن کمشنر ڈاکٹرسید سیف الرحمن، سینئر ڈائریکٹر کوآرڈینیشن مسعود عالم، سینئر ڈائریکٹر میڈیکل سروسز ڈاکٹر سلمیٰ کوثر، سینئر ڈائریکٹر ایچ آر ایم جمیل فاروقی اورمحکمہ فنانس کے افسران نے شرکت کی، اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ تمام محکمہ جاتی سربراہان منگل کے روز تک دفتر اوقات ختم ہونے سے پہلے مئی کے مہینے کی تنخواہوں کے بل محکمہ پے رول میں جمع کرادیں تاکہ عید کے موقع پر دی گئی ایڈوانس تنخواہ کے ساتھ پندرہ فیصد اضافے کی گئی تنخواہ بھی ادا کی جاسکے، واضح رہے کہ کے ایم سی کے ملازمین تنخواہوں میں پندرہ فیصد اضافے کا مطالبہ کرتے چلے آرہے تھے، بلدیہ عظمیٰ کراچی کے ترجمان کے مطابق تنخواہوں میں پندرہ فیصد اضافے کی خبر سے ملازمین میں خوشی کی لہر دوڑ گئی اور کے ایم سی کے ملازمین نے مسلسل کوشش اور جدوجہد کرنے پر میئر کراچی سے اظہار تشکر کرتے ہوئے کہا کہ رمضان اور عید الفطر کے موقع پر پندرہ فیصد اضافے سے ان کی خوشی دوبالا ہوگئی ہے اور اب وہ اپنے خاندان کے افراد کے ساتھ بہتر طور پر عید منا سکیں گے، میئر کراچی وسیم اختر نے ملازمین کی تنخواہوں میں پندرہ فیصد اضافے کے لئے گزشتہ دنوں وزیراعلیٰ سندھ سے ملاقات کی تھی اور اس مسئلے کے حل کے لئے درخواست کی تھی جس پر وزیراعلیٰ سندھ نے اصولی طور پر منظوری عطا کرتے ہوئے صوبائی وزیر بلدیات سید ناصر حسین شاہ کو احکامات دیئے تھے کہ محکمہ بلدیات فوری طور پر تنخواہوں میں پندرہ فیصد اضافے کی سمری انہیں بھیجیں جیسے ہی سمری انہیں موصول ہوگی وہ اس کی منظوری دے دیں گے، میئر کراچی نے اس حوالے سے اس سے قبل بھی وزیراعلیٰ سندھ کو متعدد خطوط ارسال کئے اور انہیں اس بات سے آگاہ کیا کہ کے ایم سی کی تمام کی مد میں دی جانے والی گرانٹ میں اضافہ کیا جائے تاکہ وہ ملازمین کی تنخواہوں میں بجٹ کے موقع پر اعلان کردہ پندرہ فیصد کا اضافہ کرسکیں، اسی طرح مختلف محکموں کی تنخواہوں میں اضافے اور پینشن کی مد میں بقایاجات کی ادائیگی کے لئے بھی میئر کراچی وسیم اختر مسلسل حکومت سندھ اور وفاقی حکومت کو خطوط ارسال کرتے رہے جس کے نتیجے میں حکومت سندھ کی جانب سے 10 کروڑ روپے کی گرانٹ کے ایم سی کو وصول ہوئی اور میئر کراچی وسیم اختر نے گرانٹ موصول ہوتے ہی کے ایم سی کے تمام ملازمین کی تنخواہوں میں اضافے کے فوری احکامات جاری کئے اور یہ بھی ہدایت کی کہ یہ اضافہ عید ایڈوانس کے ساتھ ملازمین کو دیا جائے تاکہ ملازمین کی عید کی خوشیوں میں اضافہ کیا جاسکے۔

مزید :

صفحہ اول -