بھارت میں اچانک کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں خوفناک اضافہ، کل تعداد کتنی ہوگئی؟ پریشان کن اعدادوشمار جاری

بھارت میں اچانک کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں خوفناک اضافہ، کل تعداد ...
بھارت میں اچانک کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں خوفناک اضافہ، کل تعداد کتنی ہوگئی؟ پریشان کن اعدادوشمار جاری

  

نئی دلی(ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارت میں اچانک کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں خوفناک اضافہ ہوگیا۔ کورونا وائرس متاثرین کی تعداد ایک لاکھ سے بھی  تجاوز کر گئی۔ یہ صورتحال دنیا کی  دوسری بڑی آبادی والے ملک  کے لیے بہت بڑا چیلنج بنتی جا رہی ہے۔ 

بی بی سی کے مطابق خاص بات یہ ہے کہ یہ خبر حکومت کے اس اعلان کے ایک بعد سامنے آئی ہے جس میں لاک ڈاؤن میں اہم نرمیاں پیدا کیے جانےسے متعلق بتایا گیا تھا۔لاک ڈاؤن میں نرمی کے باوجود ملک میں متاثرین کی تعداد میں مسلسل اضافہ دیکھنے میں آ رہا ہے۔ ماہرین نے اس کی وجہ بڑی تعاد میں لوگوں کا ایک دوسرے سے ملنا جلنا بتائی ہے۔

چند پیش گوئیوں کے مطابق انڈیا میں کورونا وائرس کے اثرات جولائی تک رہیں گے۔ تاہم اس کا انحصار اس بات پر ہوگا کہ معاشرتی دوری کو کتنی کامیابی کے ساتھ برقرار رکھا جاتا ہے۔

دوسری جانب  بھارت میں ہزاروں شہری لاک ڈاون کی وجہ سے اپنے آبائی گھروں سے دور شہروں میں پھنسے ہوئے ہیں ۔بڑی تعداد پیدل شہر شہر گاوں گاوں کا سفر کررہی ہے۔ اس دوران متعدد حادثات بھی پیش آئے جن میں قیمتی جانیں ضائع ہوئیں۔ہزاروں افراد کی شہروں سے گاؤں کی جانب نقل مکانی نے وائرس کا پھیلاو رکنے کیلئے کیے جانے والے اقدام کو انسانی المیے میں بدل دیا ہے۔

بھارت نے لاک ڈاون کے دوران معمولی جرائم میں ملوث ہزاروں قیدیوں کو بھی رہا کیا ہے جو جیل سے تو نکل گئے ہیں لیکن مسائل نے انہیں گھیر لیا ہے۔ لاک ڈاون کی وجہ سے وہ گھروں کو نہیں پہنچ پا رہے جبکہ ضروریات زندگی کیلئے ان کے پاس رقم نہیں ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -کورونا وائرس -