تحریک انصاف کے رہنماؤں نے سندھ میں گورنر راج کا مطالبہ کر دیا

تحریک انصاف کے رہنماؤں نے سندھ میں گورنر راج کا مطالبہ کر دیا
تحریک انصاف کے رہنماؤں نے سندھ میں گورنر راج کا مطالبہ کر دیا

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) تحریک انصاف کے رہنماؤں نے سندھ میں گورنر راج کا مطالبہ کر دیا۔ انہوں نے کہا صوبائی حکومت نے کچھ نہیں کیا، وفاق مداخلت کرے، وزیراعلیٰ مراد علی شاہ رونا دھونا بلیٹن ہی کرسکتے ہیں۔

پی ٹی آئی رہنما فردوس شمیم نقوی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا آرٹیکل 245 کے تحت صدر پاکستان کو اختیار دیا گیا ہے کہ جب وہ محسوس کریں پیسے کا درست استعمال نہیں ہو رہا وہ فنانشل ایمرجنسی نافذ کر دیں گے، وزیراعلیٰ روزانہ میٹنگ میں بیٹھتے ہیں وفاق سے جو چاہئے مانگیں۔ انہوں نے کہا ڈاکٹروں کو مریضوں کی خدمت کر کے عبادت کا بہترین موقع ملا ہے، عوام کا ڈاکٹروں پر حق ہے۔

فردوس شمیم نقوی کا کہنا تھا چیف جسٹس کے فیصلے نے ثابت کر دیا سندھ حکومت غلط ہے، آج کا یہ وطیرہ ہے کوئی گولی لگنے سے بھی مر جائے تو اسے کورونا کیس کہہ دیا جاتا ہے، کراچی میں 2007 سے ایک بوند پانی کا اضافہ نہیں کیا، حکومت سندھ نے ابھی تک جواب نہیں دیا پیسے کس طرح خرچ کیے اور نہ ہی سندھ کی معیشت بحال کرنے کیلئے اقدامات سے متعلق کچھ بتایا گیا، کل سندھ اسمبلی اجلاس میں عوام کو ان کی حکومت کے کارنامے بتائیں گے۔

حلیم عادل شیخ نے کہا کہ سب سے زیادہ اینٹی کرپشن کیلئے پروڈکشن آرڈر جاری کیے گئے، پیپلزپارٹی سندھ اسمبلی میں نیلسن منڈیلا بن جاتی ہے، لاڑکانہ کو ٹارگٹ کیا جا رہا ہے، بھٹو کے وارثوں سے بدلا لیا جا رہا ہے۔

مزید :

قومی -علاقائی -سندھ -کراچی -