پاکستان نے بھارت کے نئے ڈومیسائل قانون کو مسترد کر دیا

پاکستان نے بھارت کے نئے ڈومیسائل قانون کو مسترد کر دیا
پاکستان نے بھارت کے نئے ڈومیسائل قانون کو مسترد کر دیا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان نے بھارت کے نئے ڈومیسائل قانون کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ گرانٹ آف جموں و کشمیر پروسیجر ایکٹ کشمیریوں کو حقوق سے محروم کرنے کی سازش ہے، بھارت جان لے کہ ان اقدامات سے کشمیر کی متنازعہ حیثیت تبدیل نہیں ہو سکتی، مسئلہ کشمیر کو اقوام متحدہ اور عالمی برادری متنازعہ معاملہ قرار دے چکے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق اپنے ایک بیان میں دفترخارجہ کی ترجمان عائشہ فاروقی نے کہاکہ جموں اینڈ کشمیر گرانٹ آف ڈومیسائل سرٹیفیکٹ پروسیجر دوہزار بیس کے تحت مقبوضہ کشمیر کے عوام کو ڈومیسائل سرٹیفیکٹ جاری نہ کرنے کی بھارتی حکومت کی کوششوں کی سخت مذمت کرتے ہوئے اسے مسترد کرتے ہیں، ڈومیسائل کا نیا قانون غیر منصفانہ اور اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی متعلقہ قراردادوں، چوتھے جنیوا کونشن اور پاکستان اور بھارت کے درمیان دوطرفہ معاہدوں سمیت عالمی قوانین کے منافی ہے۔ترجمان نے کہاکہ ڈومیسائل قانون کا مقصد مقبوضہ کشمیر کی آبادی کا تناسب تبدیل کرنا اور اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی متعلقہ قراردادوں کے مطابق آزادانہ اورغیرجانبدارانہ استصواب رائے کے ذریعے کشمیری عوام کے حق خودارادیت کی جدوجہد کو سبوتاژ کرنا ہے۔

مزید :

قومی -علاقائی -