دوبارہ کمر کی تکلیف میں مبتلا ہونے والے حسن علی کیلئے ایک اور مشکل کھڑی ہو گئی، مداحوں کیلئے تشویشناک خبر

دوبارہ کمر کی تکلیف میں مبتلا ہونے والے حسن علی کیلئے ایک اور مشکل کھڑی ہو ...
دوبارہ کمر کی تکلیف میں مبتلا ہونے والے حسن علی کیلئے ایک اور مشکل کھڑی ہو گئی، مداحوں کیلئے تشویشناک خبر

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) قومی کرکٹ ٹیم کے فاسٹ باﺅلر حسن علی ایک بار پھر کمر کی تکلیف میں مبتلا ہو چکے ہیں تاہم کورونا وائرس کے باعث دنیا بھر میں عائد سفری پابندیوں اور لاک ڈاؤن کے باعث ان کا علاج کیلئے بیرون ملک جانا بھی مشکل ہوگیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق حسن علی گزشتہ برس ستمبر میں کمر کی تکلیف کا شکار ہو کر قومی ٹیم سے باہر ہو ئے تھے لیکن پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل ) سے قبل حسن علی کو فٹ قرار دیا گیا اور انہوں نے پشاور زلمی کی نمائندگی بھی کی لیکن 30 اپریل کو وہ ایک بار پھر کمر کی تکلیف میں مبتلا ہو گئے اور اس کا انکشاف چیف سلیکٹر اور ہیڈ کوچ مصباح الحق نے قومی کرکٹرز کے سینٹرل کنٹریکٹ کے اعلان کے دوران کیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ حسن علی کی تکلیف سنجیدہ نوعیت کی ہے اور اسی وجہ سے اس خدشے کا اظہار کیا جا رہا ہے کہ فاسٹ باﺅلر طویل عرصے کیلئے کرکٹ سے دور رہیں گے تاہم اچھی بات یہ ہے کہ پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے حسن علی کا علاج کرانے کا فیصلہ کیا ہے اور کہا ہے کہ اس حوالے سے کوئی چیز نظر انداز نہیں کی جائے گی۔

پی سی بی کے شعبہ میڈیکل کے سربراہ ڈاکٹر سہیل سلیم نے بتایا کہ علاج کیلئے حسن علی کو دنیا کے کسی بھی کونے میں بھجوانا پڑا تو بھجوائیں گے لیکن اس وقت کورونا وائرس کی وجہ سے سفری پابندیاں ہیں تاہم جیسے ہی سفری پابندیوں میں نرمی ہو گی حسن علی کو علاج کیلئے بیرون ملک بھجوانے میں کسی قسم کی تاخیر نہیں کی جائے گی۔

ڈاکٹر سہیل سلیم نے کہا کہ دنیا کے بہترین کمر کی تکلیف کے معالجوں کے ساتھ رابطے میں ہیں اور ان سے صلاح مشورہ جاری ہے، آسٹریلیا کے ماہرین سے آج ہی جواب موصول ہوا ہے جبکہ جنوبی افریقہ کے فزیو کے ساتھ بھی رابطہ ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ آسٹریلیا اور جنوبی افریقہ کے ماہرین کے ساتھ ٹائم زون کو سامنے رکھتے ہو ئے ویڈیو کانفرنس کر رہے ہیں، پی سی بی حسن علی کے علاج معالجے میں کوئی کسر نہیں اٹھا رکھے گا لیکن فوری طور پر بیرون ملک بھجوانا مشکل ہے۔

مزید :

کھیل -