اسرائیلی بمباری سے غزہ میں 52ہزار فلسطینی بے گھر ہو گئے

اسرائیلی بمباری سے غزہ میں 52ہزار فلسطینی بے گھر ہو گئے
اسرائیلی بمباری سے غزہ میں 52ہزار فلسطینی بے گھر ہو گئے

  

نیویارک(ڈیلی پاکستان آن لائن ) اسرائیلی بمباری اور پرتشدد کارروائیوں کے نتیجے میں اب تک غزہ میں 52 ہزار سے زائد فلسطینی بے گھر ہو چکے ہیں اور 450 عمارات یا تو مکمل طور پر تباہ ہو گئی ییں اور یا پھر انہی بہت بری طرح نقصان پہنچا ہے۔عالمی خبر رساں ایجنسی روئٹرز کے مطابق اقوام متحدہ کے ادارے کوآرڈینیشن آف ہیومینیٹیرین افیئرز کی ترجمان جینز لائرکے نے کہا ہے کہ بے گھر ہونے والے 47 ہزار افراد نے غزہ میں اقوام متحدہ کے 58 سکولوں میں پناہ لے رکھی ہے۔انہوں نے کہا ہے کہ 132 عمارات مکمل طور پر تباہ ہوچکی ہیں اور 316 بری طرح متاثر ہیں۔ ان میں سے چھ ہسپتال، نو پرائمری ہیلتھ کیئر سینٹرز اور واٹر پلانٹس بھی شامل ہیں جن کی وجہ سے دو لاکھ 50 ہزار افراد پانی تک سے محروم ہوگئے ہیں۔جینز لائرکے نے کہا ہے کہ اقوام متحدہ اور اس کے شراکت دار بے گھر ہونے والے افراد تک خوراک اور دیگر ضروری سامان پہنچانے کی کوشش کر رہے ہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -