حکومت کرغزستان میں پاکستانی طلبہ کے تحفظ کو یقینی بنائے:حافظ نعیم الرحمٰن

   حکومت کرغزستان میں پاکستانی طلبہ کے تحفظ کو یقینی بنائے:حافظ نعیم الرحمٰن

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

                                                            لاہور(این این آئی)امیر جماعت اسلامی حافظ نعیم الرحمن نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ کرغزستان کے درالحکومت بشکیک میں پاکستانی طلبہ وطالبات کے تحفظ کو یقینی بنا یا جائے،طلبا نے پاکستان کے سفارتی عملہ کی سستی اور مایوس کن رویہ کی شکایت کی ہے، طلبا وطالبات کے والدین شدید پریشانی میں مبتلا ہیں،بشکیک سمیت کرغزستان کے مختلف شہروں میں زیر تعلیم طلبا وطالبات کو فی الفور محفوظ مقامات پر منتقل کیا جائے، ان کا خاندانوں سے رابطہ کروایاجائے، وزیراعظم اور وزیرخارجہ معاملہ کی نزاکت کو سمجھیں،فوری طور پر ایکشن لیں۔انہوں نے ان مطالبات کا اظہار بشکیک سے پاکستانی طلبہ کی جانب سے ان سے رابطہ اور صورت حال سے آگاہی کے بعد میڈیا کو جاری بیان میں کیا۔ حافظ نعیم الرحمن نے کہا حکومت کی جانب سے سٹوڈنٹس سے عدم رابطہ اورعدم تعاون قابل تشویش ہے۔وطن سے دور طلبہ و طالبات کی حفاظت ریاست کی ذمہ داری ہے۔انہوں نے کہا کہ حالات کو کنٹرول نہ کیا گیا تو تشدد مزید شہروں میں پھیلنے کا خدشہ ہے،پاکستانی طلبہ کی بڑی تعداد  اوش،جلال آباد اور قانت میں بھی موجود ہے۔

حافظ نعیم الرحمن

مزید :

صفحہ آخر -