شوکت خانم ہسپتال میں 9منزلہ کلینیکل ٹاور تعمیر کیا جائے گا

شوکت خانم ہسپتال میں 9منزلہ کلینیکل ٹاور تعمیر کیا جائے گا

لاہور(پ ر)شوکت خانم کینسر ہسپتال لاہور میں ایک نئے کلینیکل ٹاور کی تعمیر کی منصوبہ بندی کا آغاز ہوگیا ہے۔ ہسپتال کی انتظامیہ کے مطابق یہ نیا کلینیکل ٹاور ایک نو منزلہ عمارت پر مشتمل ہو گا اور بائیس سال قبل ہسپتال کی تعمیر سے اب تک کی سب سے بڑی توسیع ہوگی۔ کلینیکل ٹاور میں موجود طبی سہولیات میں اضافے کے ساتھ ساتھ ایک نیا بون میرو ٹر انسپلانٹ یونٹ، نئی امیجنگ موڈ یلیٹیز (Imaging modalities) ، ریڈی ایشن کے جدید ترین آلات، ایک نیا ایمرجنسی اسیسمنٹ روم شامل ہونگے جبکہ عمارت کی دو منزلیں پتھالوجی سروسز کے لئے وقف ہوں گی جو کہ نہ صرف ہسپتال کیلئے معاون ہونگی بلکہ پورے پاکستان میں پھیلے شوکت خانم لیبارٹری کلیکشن سینٹرز کے بڑھتے ہوئے نیٹ ورک کیلئے بھی مفید ثابت ہونگی۔اس تعمیر سے ہسپتال میں کینسر کے مریضوں کو داخل کرنے اور ان کا علاج کرنے کی صلاحیت بھی بڑھے گی اور ساتھ ہی صحتِ عامہ سے جڑے پروفیشنلز کیلئے تحقیق، تعلیم اور ٹریننگ کے مزید مواقع میسر آئیں گے۔ انتظامیہ نے اُمید ظاہر کی کہ موسمِ گرما2017 میں اس کلینیکل ٹاور کی تعمیر کا آغاز ہو جائے گا۔ یہ نیا کلینکل ٹاورجدید ٹیکنالوجی سے لیس اور بین الاقوامی صحتِ عامہ کی سفارشات کے عین مطابق تعمیر کیا جائے گا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1