میڈیا ہاؤسز کی مشاورت سے صحافیوں کی سیکیورٹی کا بل اسمبلی میں پیش کیا جائیگا :مریم اورنگزیب

میڈیا ہاؤسز کی مشاورت سے صحافیوں کی سیکیورٹی کا بل اسمبلی میں پیش کیا جائیگا ...

لاہور(خبر نگار خصوصی) وزیرمملکت برائے اطلاعات ونشریات مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ صحافیوں کی سیکیورٹی کیلئے بل کا ڈرافٹ تیار ہے جس کو اگلے ہفتے میڈیا ہاؤسز میں بھیجا جائے گا جہاں سے تجاویز کے بعد مذکورہ بل کو پاس کرانے کیلئے قومی اسمبلی میں پیش کیا جائے گا۔پرنٹ میڈیا کو ادائیگیوں اور اشتہارات کے ریٹس کا معاملہ بھی حل کیا جائے گا ، میڈیا ہاؤسز،صحافت اور محکمہ اطلاعات و نشریات کی بہتری کیلئے تجاویز دیں ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز سی پی این ای کے عہدیداروں کے ساتھ تعارفی نشست اور عشائیہ کے موقع پر گفتگوکرتے ہوئے کیا۔ تقریب میں سی پی این ای کے صدر ضیاء شاہد، روز نامہ پا کستان کے چیف ایڈیٹر مجیب الرحمن شامی، عارف نظامی،سرمد علی، شاہین قریشی، عطاء الرحمن،رحمت علی رازی،ممتاز طاہر، ممتاز شاہ، اعجاز الحق، ڈاکٹر جبار خٹک، جمیل اطہر،سجاد بخاری،نوید چوہدری، ایاز خان،عرفان اطہر، شفقت جلیل اور ، عثمان مجیب شامی نے شرکت کی۔اس موقع پر سینئر صحافیوں نے مریم اورنگزیب کو وزیر مملکت بننے پر مبارکباد دی اور نیک خواہشات کا اظہار کیا۔مریم اورنگزیب نے سینئرصحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پرنٹ میڈیا کے ساتھ بہترین تعلقات ہیں اور اخبارات کی بہتری میری اولین ترجیح ہے۔انہوں نے کہا کہ محکمہ اطلاعات ونشریات علاقائی اخبارات کی بہتری کیلئے کام کررہا ہے تاہم اخبارات کو بھی مزید بہتربنانے کی ضرورت ہے،وزیر مملکت نے کہا کہ وزارت پرنٹ میڈیا کومستحکم بنانے کیلئے کام کر رہی ہے جبکہ صحافیوں کی سیفٹی کے بل کا ڈرافٹ تیار کر لیا ہے جو اگلے ہفتے اخبارات کے دفاتر میں بھیجا جائے گاجس کے بعد قومی اسمبلی سے پاس کروایا جائے گا۔مریم اورنگزیب نے کہا کہ اخبارات کے اشتہارت کے حوالے سے پالیسی بنانے جا رہے ہیں ،تین چار برسوں سے ریٹس نہیں بڑھے جس کیلئے وزیر اعظم سے بات کر لی ہے اور صرف منظوری باقی ہے۔انہوں نے کہا کہ سیاست میں اتار چڑھاؤ آتے رہتے ہیں اورایسے وقت میں جب پاکستان آگے بڑھ رہا ہے وزیر مملکت بننا میر ی خوش قسمتی ہے۔مریم اورنگزیب نے کہا کہ میرے پاس ڈیڑھ سال کا عرصہ ہے جس میں سب چیزیں ٹھیک نہیں کر سکتی لیکن میر ی کوشش ہے کہ کم وقت میں الیکٹرانک اور پرنٹ میڈیا کیلئے کچھ ایسا کام کر جاؤں جس سے اس شعبے کو فائدہ ہو۔انہوں نے کہا کہ تقریب میں موجودتھنک ٹینک کے پاس میر ا رابطہ نمبر موجود ہے اور امید کرتی ہوں کہ صحافت کی بہتری کیلئے مجھے تجاویز ارسال کی جائیں گی۔ضیاء شاہد نے سی پی این ای اور اے پی این ایس کی جانب سے وزیرمملکت بننے پر مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ اللہ تعالیٰ آپ کو مشکل دور میں کامیاب کرے۔روزنامہ پاکستان کے چیف ایڈیٹرمجیب الرحمن شامی نے کہا کہ صحافیوں اور حکومت کے درمیان گلے شکوے جاری رہتے ہیں تاہم آپ کی رفاقت میں جمہوری عمل کو بھی آگے بڑھنے میں مدد ملے گی۔عارف نظامی نے مریم اورنگزیب کو مبارکباد دیتے ہوئے سابق وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات پرویز رشید کو بھی خراج تحسین پیش کیا۔انہوں نے کہا کہ گزشتہ تین برسوں میں کوئی بھی میڈیا ہاؤس اپنے ساتھ امتیازی سلوک کا شکوہ نہیں کرسکتا۔اس سے پہلے لاہور پریس کلب میں ’’میٹ دی پریس‘‘ میں گفتگو کرتے ہوئے کہی۔ مریم اورنگزیب نے کہا کہ حکومت پیشہ ورانہ صحافیوں کے مسائل سے بخوبی آگاہ ہے،جس کو عملی جامہ پہناتے ہوئے تحفظ اور سیکورٹی بل کا مسودہ تیار کرلیا گیا ہے، جرنلسٹ کے تحفظ اور سیکورٹی بل کی پارلیمنٹ سے منظوری کے بعد اس کے ثمرات تمام صحافی برادری کو ملیں گے۔انہوں نے کہا کہ صحافیوں کی پیشہ ورانہ تربیت کیلئے حکومت موثر اقداما ت کررہی ہے،پارلیمنٹ رپورٹر ایسوسی ایشن کے ارکان کو جدید تقاضوں سے ہم آہنگ کرنے کیلئے جلدبین الاقوامی معیار کی تربیت دینے کا پروگرام ترتیب دیا جا رہا ہے۔ آٹھویں ویج بورڈ ایوارڈ کے نفاذ کے حوالے سے پوچھے گئے ایک سوال کے جواب میں مریم اورنگزیب نے کہا کہ ویج بورڈ ایوارڈ میں موجود خامیوں اور کوتاہیوں کو بہتر سسٹم کے ذریعے دور کیا جائے گا اور ویج بورڈ کا نفاذ میڈیا ہاؤسزکی مشاورت کے بعدکیا جائیگا۔ انہوں نے کہاکہ شفافیت ہماری حکومت کی اولین ترجیح ہے اسی لئے رائٹ ٹو انفارمیشن ایکٹ کو ملکی تاریخ میں پہلی بار قانون کا حصہ بنایا جا رہا ہے تاکہ کوئی بھی شفافیت پر انگلی نہ اٹھا سکے۔ خواتین کے تحفظ کے حوالے سے پوچھے گئے ایک سوال کے جواب میں وزیر مملکت برائے اطلاعات ونشریات نے بتایا کہ خواتین صحافیوں کیلئے پریس انفارمیشن ڈیپارٹمنٹ اسلام آبادمیں میڈیا بریفنگ کیلئے الگ سیکشن تشکیل دیدیا گیا ہے جسے بہت جلد باقی جگہوں پر بھی فعال کیا جائیگامریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ عمران خان کو وکیل نہیں بلکہ اپنی نیت بدلنی چاہئے، قوم دیکھ رہی ہے کہ جھوٹ کون بول رہا ہے۔ جمعہ کو اپنے ایک بیان میں وزیر مملکت نے مزید کہا کہ وزیراعظم محمد نوازشریف کی قیادت میں ترقی اور خوشحالی کا سفر نہیں رک سکتا۔

مزید : صفحہ اول