رشوت معاشرے کو دیمک کی طرح کھوکھلاکررہی ہے،ندیم سرور

رشوت معاشرے کو دیمک کی طرح کھوکھلاکررہی ہے،ندیم سرور

لاہور ( سپیشل رپورٹر)ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل اینٹی کرپشن پنجاب ندیم سرور نے کہا کہ رشوت ایک معاشرتی لعنت ہے جو معاشرے کو دیمک کی طرح کھوکھلاکررہی ہے ۔ اس لعنت کے خاتمہ کیلئے ہمیں خود احتسابی کے عمل کو فروغ دینے کی ضرورت ہے ۔ معاشرے میں رشوت کا طرز عمل عام آدمی کے استحصال کا باعث ہے ۔ محکمہ انسداد رشوت ستانی پنجاب اس قومی جرم کو کنٹرول کرنے کیلئے روایتی طریقے کو کالعدم قرار دے کر جدید فرانزک مکنیزم کو متعارف کروارہی ہے جس کیلئے افسران کی جدید تقاضوں پر تربیت کا آغاز ہوچکاہے جبکہ ڈویژن سطح پر اینٹی کرپشن کمپلیکسز کی تعمیر آخری مراحل میں ہے ۔ ان خیالا ت کا اظہار انہوں نے فیصل ہال سرگودہا میں ریجنل اینٹی کرپشن کی طرف سے منعقد ہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ اس موقع پر قائمقام ریجنل ڈائریکٹر ریحانہ فرحت اور اسسٹنٹ ڈائریکٹر اسرار حسین کاظم کے علاوہ چوہدری شمیم جہانگیر ‘ڈاکٹر ہارون الرشید تبسم‘ ایڈیشنل ڈسٹرکٹ کلکٹر محمد ذوالقرنین ‘ ڈائریکٹر صحت عرفان فرید‘ ای ڈی او ایجوکیشن لیاقت علی ناصر ‘ ڈی ایم او فاروق حیدر عزیز ‘ ای ڈ ی او صحت نصرت ر یاض ‘ ڈی او ہیلتھ ڈاکٹر جاوید شیخ ‘ شاہین احسان مغل ‘ ظہور ندیم ‘ ٹی ایم او رانا جمیل اختر ‘ شہریوں ومعززین نے شرکت کی۔ ندیم سرور نے کہا کہ عوام اور محب وطن شہری معاشرے سے کرپشن کے خاتمہ کیلئے محکمہ تعاون کریں تاکہ ملک کو ترقی کی شاہراہ پر گامزن کیا جاسکے۔ انہوں نے اس موقع پر بتایا کہ محکمہ میں بہتری کیلئے عملہ کی تنخواہوں میں اضافہ ‘ تیز تر ٹرانسپورٹ ‘ جدید مواصلاتی نظام کی فراہمی اولین ترجیح ہے جسے بتدریج مکمل کیا جائے گا۔ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے اے ڈی سی محمد ذوالقرنین نے کہاکہ اداروں سے کمیشن مافیا کاخاتمہ او راکاؤنٹس کے نظام کو شفاف بنا کر کرپشن کاخاتمہ ممکن ہے ۔

مزید : صفحہ آخر