بلدیہ چشتیاں ، خواتین کی 5 نشستوں کیلئے 6,6 ووٹوں سے منتخب ہونیوالی 6خواتین کا فیصلہ بذریعہ قرعہ اندازی

بلدیہ چشتیاں ، خواتین کی 5 نشستوں کیلئے 6,6 ووٹوں سے منتخب ہونیوالی 6خواتین کا ...

چشتیاں (نمائندہ پاکستان)بلدیہ چشتیاں کی دس مخصوص نشستوں کے انتخابات میں خواتین کی پانچ نشستوں کے لیے 6,6ووٹوں سے منتخب ہونے والی چھ خواتین کا فیصلہ بذریعہ (بقیہ نمبر18صفحہ12پر )

قرعہ اندازی کر دیا گیا ریٹرننگ آفیسر و اسسٹنٹ کمشنر چشتیاں ارشد محمود سدھو نے اپنے دفتر میں پرچی قرعہ کے ذریعے پانچ خواتین رابعہ بصری ، رابعہ مسعود کچھی ، سلمیٰ پروین ، فرخندہ طلعت اور فرزانہ رفیق رحمانی کو خواتین کی پانچ نشستوں پر کامیاب قرار دے دیا ۔کامیاب ہونے والی تین خواتین کا تعلق مسلم لیگی ایم این اے چیمہ گروپ اور دوخواتین کا تعلق مسلم لیگی ایم پی اے باجوہ گروپ سے بیان کیا گیا ہے ۔ اس موقع پر تحصیلدار اجمل سیف چٹھہ بھی موجود تھے ۔ بذریعہ قرعہ پانچ خواتین کی کامیابی کے بعد دونوں گروپوں کے حامیوں نے دفتر اسسٹنٹ کمشنر کے باہر اپنے اپنے گروپوں کے مقامی لیڈران کے حق میں نعرے بازی کی ۔ یاد رہے کہ مسلم لیگی ایم این اے چوہدری طاہر بشیر چیمہ اور مسلم لیگی ایم پی اے احسان الحق باجوہ کے مابین سیاسی اختلاف ہونے کی بناء پر بلدیہ چیئر مین کا انتخاب موضوع بحث بنا ہوا ہے اور کونسلروں کی ہارس ٹریڈنگ جاری ہے ۔چشتیاں کے 36وارڈز سے منتخب 36کونسلروں اور10مخصوص نشستوں کو شامل کر کے کل ووٹوں کی تعداد 46ہو گئی ہے ۔ مخصوص نشستوں کے انتخاب کے بعد کونسلروں کا کہنا ہے کہ ایم این اے چیمہ گروپ میں 25ممبر جبکہ ایم پی اے باجوہ گروپ کے ممبران کی تعداد 21رہ گئی ہے ۔ جس سے چیمہ گروپ کے امیدواربرائے چیئرمین بلدیہ چشتیاں میاں عاطف متیانہ کو فی الوقت 4ووٹوں کی برتری حاصل ہے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر