پاناما لیکس کیس میں ثبوت پیش کرنے کی ذمہ داری ہماری نہیں ، عدالتی فیصلے کو قبول کریں گے: عمران خان

پاناما لیکس کیس میں ثبوت پیش کرنے کی ذمہ داری ہماری نہیں ، عدالتی فیصلے کو ...
پاناما لیکس کیس میں ثبوت پیش کرنے کی ذمہ داری ہماری نہیں ، عدالتی فیصلے کو قبول کریں گے: عمران خان

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

مانچسٹر (مانیٹرنگ ڈیسک) چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے کہ پاناما لیکس کیس سے متعلق ثبوت پیش کرنے کی ذمہ داری ہماری نہیں نواز شریف کی ہے ۔عدالت جو فیصلہ کریگی اسے قبول کریں گے ۔

مانچسٹر ایئر پورٹ پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ان کا دورہ کسی سازش کا حصہ نہیں ، دوست کی بہن کی شادی میں شرکت کے لیے آیا ہوں۔

عمران خان نے کہا کہ میں چاہتا تھا حامد خان کیس کی پیروی کریں لیکن وہ اس کیس سے الگ ہونا چاہتے ہیں۔ واپس جاکر سینئر لیڈرشپ سے اس حوالے سے بات چیت کریں گے۔

ایک سوال کے جواب میں عمران خان نے کہا کہ کوئی سازش نہیں ہورہی ، پرانے دوست کی بہن کی شادی میں شرکت کے لیے آیا ہوں اوراس کے بعد لندن میں بچوں سے ملاقات کرکے اتوار کو واپس آجاﺅں گا۔

پاناماکیس سے متعلق سوال پر عمران خان کا کہنا تھا کہ پہلی دفعہ ملک کا چیف ایگزیکٹو کٹہرے میں کھڑا ہواہے، ہم عدالت کی مدد کررہے ہیں،ثبوت دینے کی ذمہ داری ہماری نہیں نوازشریف کی ہے ، عدالت ان سے پوچھے گی کہ پیسہ کہاں سے آیا ، درمیان میں یہ قطری پہنچ گیا ہے اس پر بھی سوال و جواب ہوں گے، عدالت جو فیصلہ کرےگی اسے ہمیں قبول کرنا پڑیگا۔عمران خان کے ہمراہ شیخ رشید اور نعیم الحق بھی تھے ۔

مزید : قومی /اہم خبریں