چیئرمین ہائر ایجوکیشن کمیشن ڈاکٹر مختار کی تعیناتی لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج

چیئرمین ہائر ایجوکیشن کمیشن ڈاکٹر مختار کی تعیناتی لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج
چیئرمین ہائر ایجوکیشن کمیشن ڈاکٹر مختار کی تعیناتی لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی )چیئرمین ہائر ایجوکیشن کمیشن ڈاکٹر مختار کی تعیناتی لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج کردیا گیا۔اس سلسلے میںاسامہ میمن کی طرف سے دائر کی گئی درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ چیئرمین ایچ ای سی ڈاکٹر مختار کی تعیناتی قواعد و ضوابط سے ہٹ کر کی گئی ہے.

ڈاکٹر مختار کی بطور چیئرمین تعیناتی ایچ ای سی رولز کی بھی خلاف ورزی ہے، چیئرمین ایچ ای سی ڈاکٹر مختار متعلقہ تجربہ اور اہلیت نہیں رکھتے جبکہ بطور چیئرمین ایچ ای سی ڈاکٹر مختار کے خلاف کروڑوں روپے کی کرپشن کا آڈٹ پیرا بھی موجود ہے، درخواست میں کہا گیا ہے کہ ڈاکٹر مختار کو زرعی یونیورسٹی میں بھی قواعد وضوابط سے ہٹ کر تعینات کیا گیا، ڈاکٹر مختار کی پروفیسرشپ بھی غیرقانونی اور جعلی ڈگری کی بنیاد پر دی گئی جبکہ جس ایجوکیشنل ایڈمنسٹریٹر نے ڈاکٹر مختار کی بطور چیئرمین ایچ ای سی تعیناتی کا نوٹیفکیشن جاری کیا، انکی اپنی ڈگری بھی مشکوک ہے، درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ وزیر اعظم کو چیئرمین ایچ ای سی ڈاکٹر مختار کو عہدے سے ہٹانے کا حکم دیا جائے اور ڈاکٹر مختار سے کرپشن شدہ رقم کی ریکوری بھی کی جائے۔

مزید : لاہور