بھیرہ: زمین پر بااثر افراد قابض، متاثرہ میاں بیوی کا بچوں سمیت سڑک کنارے دھرنا، خود سوزی کی دھمکی

بھیرہ: زمین پر بااثر افراد قابض، متاثرہ میاں بیوی کا بچوں سمیت سڑک کنارے ...
بھیرہ: زمین پر بااثر افراد قابض، متاثرہ میاں بیوی کا بچوں سمیت سڑک کنارے دھرنا، خود سوزی کی دھمکی

  


سرگودھا  (ویب ڈیسک) کرڑوں روپیہ مالیت کی جائیداد کو مبینہ طور پر جعلی مختار نامہ تیار کرکے ہتھیانے پر مالک جائیداد نے اپنی ملکیتی جگہ کے سامنے سڑک کنارے اپنی اہلیہ کے ہمراہ دھرنا دے دیا۔ ریلوے سٹیشن کے قریب واقع 33 مرلہ جائیداد کے مبینہ مالک انعام الہٰی کی اہلیہ کی کھلی کچہری میں شکایت پر ڈپٹی کمشنر چوہدری لیاقت علی چٹھہ سڑک کنارے دھرنا دینے والے خاندان کے پاس گئے اور انہیں فوری انصاف دلانے کے لئے اسسٹنٹ کمشنر بھیرہ چوہدری نوید حسین دیرتھ کو حکم دیا کہ وہ دونوں فریقوں کا موقف سن کر انصاف کریں۔ اسسٹنٹ کمشنر چوہدری نوید حسین دیرتھ نے اپنے عملہ کے ہمراہ متاثرین سے ملاقات کی۔ ان کے ہمراہ میڈیا کے ارکان بھی تھے۔

انعام الہٰی اور اس کی اہلیہ نے اسسٹنٹ کمشنر کو بتایا کہ اگر انہیں انصاف نہ ملا تو وہ خود پر پٹرول چھڑک کر خود سوزی کرلیں گے۔ انہوں نے بتایا کہ جگہ پر قابض یاسین خان نے مبینہ جعلی مختار نامہ کے ذریعہ اس کی 33 مرلے اراضی ہتھیالی ہے جس پر اس کے خلاف تھانہ لوئر مال لاہور میں مقدمہ درج ہے اور وہ حکمران جماعت کے کونسلر توفین خان کا والد ہے۔ اس نے بتایا کہ وہ دل کا مریض ہے آکسیجن پر زندہ ہے اگر اسے کچھ ہوگیا تو اس کا ذمہ دار انتظامیہ ہوگی۔ اس نے اسسٹنٹ کمشنر کو داد رسی کے لئے وزیراعلیٰ پنجاب سیکرٹریٹ سے جاری کی گئی چٹھیاں بھی دیں۔ اسسٹنٹ کمشنر چوہدری نوید حسین دیرتھ نے انہیں یقین دلایا کہ ان کے ساتھ کسی قسم کی زیادتی نہیں ہونے دی جائے گی اور پیشکش کی کہ وہ رہائش کے لئے انہیں اپنے دفتر میں کمرہ دینے کو تیار ہیں مگر متاثرہ فیملی کا کہناتھا کہ مبینہ ملزمان کے خلاف ایف آئی آر کا اندراج نہ کیا گیا تو وہ سڑک پر ہی خود سوزی کرلیں گے۔ جگہ پر قابض یاسین خان کے موقع پر موجود بیٹے موجودہ کونسلر توفیق خان نے کہا کہ ان پر الزام غلط ہے اور انہوں نے یہ جگہ رقم دے کر خریدی ہے۔

مزید : سرگودھا