ٹماٹر کی کمی کا مسئلہ ہر سال پیدا ہوتا ہے آئندہ چند روز میں حل ہو جائیگا:عبدالرزاق داؤد

ٹماٹر کی کمی کا مسئلہ ہر سال پیدا ہوتا ہے آئندہ چند روز میں حل ہو ...

  



لاہور(این این آئی) وزیراعظم کے مشیر برائے صنعت، ٹیکسٹائل اور سرمایہ کاری عبدالرزاق داؤد نے کہا ہے کہ ٹماٹر کی کمی کا مسئلہ آئندہ چند روز میں حل ہوجائے گا،چین کیسا تھ طے پانے والا آزادانہ تجارت کا دوسرا معاہدہ آئندہ ماہ یکم ستمبر سے نافذ ہوگا اور پہلے ہی سال پاکستان کی مجموعی برآمدات میں پانچ سوملین ڈالرکااضافہ ہوگا۔انہوں نے ان خیالات کااظہار گزشتہ روزپاکستان میں ٹائر تیار کرنے والی معروف کمپنی سروس انڈسٹریز لمیٹیڈ اورچائنہ کی ٹائر بنانے کی صفحہ اول کی کمپنی چاؤ یانگ لونگ مارچ ٹائر کمپنی لمیٹیڈ کے مابین ہونے والے تجارتی معاہدے کی تقریب میں خطاب کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ تقریب میں چیئرمین بورڈ آف انویسٹمنٹ زبیر گیلانی،پاکستان میں چین کے قونصلیٹ لانگ ڈنگ بن، سروس انڈسٹریز لمیٹیڈ کے سی ای او عارف سعید، چاؤیانگ لونگ مارچ ٹائرکمپنی لمیٹیڈ کے چیئرمین نے بھی خطاب کیا۔ وزیراعظم کے مشیر برائے صنعت، ٹیکسٹائل اور سرمایہ کاری عبدالرزاق داؤد نے کہاکہ خوشی ہے کہ پاکستان میں انٹرنیشنل سرمایہ کار سرمایہ کاری کررہے ہیں، پہلے مرحلے پر یہ سو ملین ڈالر کی سرمایہ کاری کریں گے جبکہ دوسرے مرحلے میں سرمایہ کاری کاحجم دو سو پچاس ملین ڈالر تک بڑھا یا جائے گا، اس معاہدے کے تحت بننے والے 70فیصد ٹائر برآمد کئے جائیں جبکہ30فیصد لوکل مارکیٹ میں فراہم کئے جائیں گے۔ انہوں نے ٹماٹر کی قلت کے حوالے سے سوال کا جواب دیتے ہوئے کہاکہ ٹماٹر کی کمی کا مسئلہ ہر سال پیدا ہوتا ہے جس سے ان کی قیمتیں زائد ہوجاتی ہیں ۔ قبل ازیں انہوں نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ پاکستان میں بڑے پیمانے پر بیرونی سرمایہ کاری ہوئی اورنئی سرمایہ کاری آرہی ہے جس سے روزگار کے وسیع مواقعے پیدا ہورہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ چاؤیانگ لونگ مارچ ٹائرکمپنی بہت زبردست کمپنی ہے اس کے چیئرمین مسٹر لی جب پاکستان آئے اور مجھ سے ملے تو میں نے کہاکہ آپ کو پاکستان میں بہت سے کاروباری مواقعے ملیں گے،موجودہ حکومت کی پالیسی ہے پاکستانی بزنس ہاؤسز گرو کریں اور بڑھیں۔انہوں نے کہاکہ ٹیکسٹائل سیکٹرمیں بہت سرمایہ کاری ہوئی اوردیگر شعبوں میں بھی سرمایہ کاری ہوئی ہے۔ انہوں نے کہاکہ چاؤیانگ لونگ مارچ ٹائرکمپنی لمیٹیڈ اور سروس انڈسٹریز لمیٹیڈ کے اشتراک سے پچاس ایکڑ اراضی پر جو نیا یونٹ لگ رہا ہے حکومت اپنی پالیسی کے مطابق اسے سپیشل اکنامک زون کا درجہ دے گی۔ انہوں نے کہاکہ موجود حکومت کے اقدام سے برآمدات میں اضافہ ہورہا ہے انہوں نے امید ظاہر کی جب آنے والے سالوں میں سی پیک منصوبہ مکمل ہوگا ان سڑکوں پر اس کمپنی کے ٹائر وں والے ٹرک چلیں گے۔تقریب میں چیئرمین بورڈ آف انویسٹمنٹ زبیرگیلانی نے سروس انڈسٹریز لمیٹیڈ کو چینی کمپنی کے ساتھ شراکتی معاہدہ کرنے پر مبارکبا دی اور امید ظاہر کی انشاء اللہ یہ کامیابی کا ایسا پراجیکٹ ثابت ہوگا جس سے دیگر سرمایہ کاروں کو پاکستان میں سرمایہ کاری کرنے کی حوصلہ افزائی ہوگی اوروہ پاکستان میں مزید جوائنٹ وینچرکریں گے۔

مشیر تجارت

مزید : علاقائی