بھارت خطے کے امن کو تباہ کرنے کے درپے ہے:وزیر خارجہ

بھارت خطے کے امن کو تباہ کرنے کے درپے ہے:وزیر خارجہ

  



اسلام آباد(نیوزایجنسیاں)وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے صدر سیکیورٹی کونسل اور اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل سے رابطہ کیا،بھارت کی طرف سے انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کو اجاگر کیا، یو این موگپ کو مضبوط بنانے پر زور دیاگیا۔ ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے صدر سیکیورٹی کونسل اور اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل سے رابطہ کیا۔ ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ پاکستان مقبوضہ کشمیر کی صورتحال کو اجاگر کرتا رہے گا،بھارت کے پانچ اگست کے غیر قانونی یکطرفہ عمل کے ذریعہ غیر انسانی لاک ڈاؤن میں کشمیریوں کی آواز بلند کرتا رہے گا۔ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر کی صورتحال کو اجاگر کرنے کے جاری عمل کے طور پر وزیرخارجہ نے صدر سیکیورٹی کونسل اور جنرل سیکرٹری کو خطوط لکھے ہیں۔دوسری طرف  وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ پاکستان خطے میں امن کا خواہاں ہے مگر بھارت مقبوضہ جموں و کشمیر میں اپنے یکطرفہ غیر آئینی اقدامات کے ذریعے خطے کے امن کو تہہ و بالا کرنے کے درپے ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے بین الاقوامی میڈیا کے ساتھ ملاقاتوں کے سلسلے کا آغاز کرتے ہوئے کیا جو پاکستان کی خارجہ پالیسی کی ترجیحات اور اہم خارجہ پالیسی امور کو بین الاقوامی میڈیا پر اجاگر کرنے کیلئے ایک اہم اقدام ہے۔ وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی کی طرف سے روابط کے فروغ کیلئے شروع کئے گئے سلسلے "ایف ایم کنکٹ" کی ایک کڑی ہے جس کے تحت وزیر خارجہ دانشوروں، سماجی رہنماؤں، تھنک ٹنکس، ماہرین تعلیم سمیت مختلف شعبوں سے متعلق اہم شخصیات کے ساتھ میٹنگز کریں گے تاکہ پاکستان کی خارجہ پالیسی ترجیحات کو موثر انداز میں اجاگر کیا جا سکے اور ایف ایم کنکٹ کے تحت ملاقاتوں کا یہ سلسلہ تواتر کے ساتھ جاری رہے گا۔پاکستان نے کرتارپور راہداری کی صورت میں دنیا کو واضح پیغام دیا ہے کہ ہم مذہبی  آزادی اور رواداری کے زریں اصولوں پر عمل پیرا ہیں۔ پاکستان، "افغان امن عمل" سمیت خطے میں قیام امن کے لئے اپنا مصالحتی کردار، خلوص نیت سے ادا کرتا رہے گا۔

شاہ محمو دقریشی 

مزید : صفحہ اول