حکومت محصولات میں اضافہ اور اخراجات میں کمی کرے گی:مشیر خزانہ

حکومت محصولات میں اضافہ اور اخراجات میں کمی کرے گی:مشیر خزانہ

  



اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) مشیر خزانہ عبد الحفیظ شیخ نے کہا ہے کہ پاور سیکٹر کا گردشی قرضہ دسمبر 2020تک ختم کردیا جائیگا،حکومت محصولات میں اضافہ اور اخراجات میں کمی کریگی،اخراجات میں جوکمی کی گئی ہے اسے ترقیاتی پروگرام میں خرچ کیا جائیگا،حکومت اخراجات میں بچت ہونیوالی رقوم کو ملک میں تخفیف غربت پر ختم کیا جائیگا،حکومت نان ٹیکس ریونیو کے اہداف حاصل کرنے کیلئے کوشش کررہی ہے، ملک بہت جلد معاشی استحکام حاصل کرلے گا۔ وزارت خارجہ کی جانب سے جاری اعلامیہ میں کہاگیاکہ مشیر خزانہ ڈاکڑ عبدالحفیظ شیخ نے سینئر اینکر پرسنز سے ملاقات کی جس میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ پاور سیکٹر کا گردشی قرضہ دسمبر 2020تک ختم کردیا جائیگا،آئی ایم ایف ٹیم نے پاکستان کے ساتھ مذاکرات کی تسلی بخش رپورٹ دی ہے، حکومت محصولات میں اضافہ اور اخراجات میں کمی کریگی۔ مشیر خزانہ نے کہاکہ اخراجات میں جوکمی کی گئی ہے اسکوترقیاتی پروگرام میں  خرچ کیا جائیگا، حکومت اخراجات میں بچت ہونیوالی رقوم کو ملک میں تخفیف غربت پر ختم کیا جائیگا۔مشیر خزانہ نے کہاکہ ملکی معاشی اداروں کو مضبوط کیا جارہا ہے تاکہ بہتر معاشی نتائج حاصل کئے جاسکیں، سٹیٹ بینک، ایف بی آر اور ایس ای سی پی کو مزید خودمختاری دی گئی ہے۔مشیر خزانہ نے کہاکہ ان اداروں کو زیادہ خود مختار بنانے کا مقصد انہیں آزادانہ کام کا موقع فراہم کرنا ہے۔ انہوں نے کہاکہ مالی سال کی پہلی سہ ماہی میں موجودہ حکومت کی پالیسیوں کی وجہ سے جاری کھاتوں کا خسارہ 63.1فیصد کم ہوگیا ہے۔مشیر خزانہ نے کہاکہ پہلی سہ ماہی میں تجارتی خسارہ 33.5فیصد کم ہوا ہے، ملکی ایکسپورٹس 3.8فیصد بڑھی ہیں۔مشیر خزانہ نے کہاکہ حکومت نان ٹیکس ریونیو کے اہداف حاصل کرنے کیلئے کوشش کررہی ہے، ملک بہت جلد معاشی استحکام حاصل کرلے گا۔مشیر خزانہ نے اینکرز پرسنز کے معاشی، اقتصادی، ایکسٹرنل اکاونٹس، مہنگائی، ایکسپورٹس، سرمایہ کاری،زراعت، اسٹیٹ بینک کی خودمختاری اور عوام کی حالت بہتر بنانے سے متعلق پوچھے گئے سوالات کے جوابات بھی دیئے۔

مشیر خزانہ

مزید : صفحہ اول