ہنگو،شہید فرید خان ہسپتال میں غیر قانونی بھرتیوں کا انکشاف

ہنگو،شہید فرید خان ہسپتال میں غیر قانونی بھرتیوں کا انکشاف

  



ہنگو(بیورورپورٹ)شہید فریدخان ہسپتال ہنگو میں غیر قانونی بھرتیوں کا انکشاف۔محکمہ انٹی کرپشن حرکت میں آگئی۔ایک دائی سمیت بھرتی شدہ تین ملازمین غیر قانونی طورپر بھرتی ہونے کے بعد ماہانہ تنخواہوں کی مد میں 915354روپے وصول کرچکے۔تھانہ اینٹی کرپشن ہنگو میں سابقہ ایم ایس شیر خان،ہیڈکلرک سعید اختر سمیت 5 افراد کے خلاف مقدمہ درج کر لیاگیا۔تھانہ اینٹی کرپشن ہنگو سرکل آفیسر اینٹی کرپشن کی مد عیت میں درج شدہ ایف آئی آر کے مطابق 2018 کے دوران شہید فرید خان ہسپتال میں سابقہ ایم ایس شیر خان اور ہیڈکلرک سعید اختر کی ملی بگت سے بغیر اشتہار کے قانونی تقاضوں کے برعکس خفیہ انداز میں مسما ہ تاج حلیم کو دائی،شمس الحق اور محمد زاہد کو وارڈ اردلی کی آسامیوں پر بھرتی کیاگیا جبکہ بھرتیوں میں مکمل طورپر ڈیپارٹمنٹل سیکشن کمیٹی کی سفارشات اور آسامیوں کو مشتہر کرنے کو یکسر نظر انداز کیاگیا۔ ایف آئی ار کے مطابق کہ سال 2019/18 بھرتی شدہ ملازمین کو تنخواہوں کی مد میں 9 لاکھ پندرہ ہزار 354 روپے جاری کرکے سرکاری خزانے کو نقصان سے دوچار کیاگیا۔جبکہ تھانہ سٹی اینٹی کرپشن ہنگو نے مذکورہ ملزمان کے خلاف409,419,420,468,471,52،PC/ ACTکے تحت مقدمہ درج کر لیا گیا۔.

مزید : پشاورصفحہ آخر