ویسٹ مینجمنٹ کرپشن کیس، نیب لاہور کی کارروائی،سینئر بیوروکریٹ وسیم اجمل گرفتار

ویسٹ مینجمنٹ کرپشن کیس، نیب لاہور کی کارروائی،سینئر بیوروکریٹ وسیم اجمل ...

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) نیب لاہور نے لاہورویسٹ مینجمنٹ کرپشن کیس میں کارروائی کرتے ہوئے سینئربیوروکریٹ وسیم اجمل کو گرفتار کرلیاہے، وسیم اجمل پرحکومتی خزانے کو ایک ارب روپے کا نقصان پہنچانے کا الزام ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق نیب لاہور نے لاہور ویسٹ مینجمنٹ کرپشن کیس میں سینئر بیوروکریٹ وسیم اجمل کو گرفتار کرلیا،ذرائع کے مطابق گریڈ20 کے افسر وسیم اجمل کو نیب لاہور نے ان کی رہائشگاہ سے گرفتار کیا، وسیم اجمل پر حکومتی خزانہ کو ایک ارب کا نقصان پہنچانے کا الزام ہے،ذرائع کا کہنا ہے کہ وسیم اجمل نے خاکروب کی بھرتیوں پر ایک ارب روپے سے زائد کی ادائیگیاں کروائیں۔

نیب ذرائع کے مطابق وسیم اجمل نے 2014 میں میسرز البیراک کو ویسٹ مینجمنٹ کا انتہائی مہنگے داموں ٹھیکہ دیا،وسیم اجمل نے جعلی ایگزیمپشن کے طور پر 96 ہزارامریکی ڈالرزکی چھوٹ بھی دی ،وسیم اجمل نے کمپنی سیکرٹری کی پوسٹ پرغیرقانونی بھرتی میں بھی کلیدی کردار ادا کیا،وسیم اجمل کو جسمانی ریمانڈ حاصل کرنے کےلیے احتساب عدالت لاہور میں پیش کیاجائےگا۔واضح رہے کہ وسیم اجمل کو اس سے پہلے صاف پانی کمپنی سکینڈل میں بھی گرفتار کیا گیاتھا۔

مزید : قومی /علاقائی /پنجاب /لاہور