سانگلاہل،9افرادکا شہری کے گھردھاوا،خواتین،بچوں پرتشدد 

سانگلاہل،9افرادکا شہری کے گھردھاوا،خواتین،بچوں پرتشدد 

  

سانگلاہل(تحصیل رپورٹر)مقامی وارڈ نمبر7محلہ کمیٹی بازار میں 4خواتین سمیت9افراد اصغر علی،محمد مدثر،محمد مبشر،محمد شاہد،عابدہ پروین، انیلہ،نوشی،محمد راشد اورشنیلہ نے محمد رفیق کے گھر پر زبردستی قبضہ کرنے کیلئے دھاوا بول دیا،اسکی بیوی ناہید اور بچوں کو تشدد کا نشانہ بنایا۔

،دوپٹہ کھینچ لیا اور گریبان سے پکڑ کر گھسیٹا اور کپڑے پھاڑ کر نیم برہنہ کردیا،چیخ و پکار پر محمد رفیق اور دیگر اہل محلہ آگئے تو ملزمان اسلحہ لہراتے اور جان سے مار دینے کی دھمکیاں دیتے ہوئے فرار ہوگئے، ناہید نے میاں طاہر محمود کی وساطت سے مقامی ایڈیشنل سیشن جج طارق سلیم چوہان کی عدالت میں رٹ دائر کردی،جس پر عدالت نے20نومبر کیلئے  تھانہ سٹی  پولیس سے رپورٹ طلب کرلی،  بتایا گیا ہے کہ محمد رفیق اس گھر میں چالیس سال سے رہ رہا ہے،وہ مالک و قابض ہے۔

،ملزمان آئے روز نت نئے حربوں سے غنڈہ گردی، سینہ زوری سے ناجائز طور پر قابض ہونے کی کوشش کر تے ہیں ہیں،گذشتہ روز ناہید اپنے بچوں کے ساتھ گھر میں موجود تھی، محمد رفیق گھر سے باہر تھا،ملزمان نے باہمی منصوبہ بندی سے طے شدہ منصوبہ کے تحت خاتون خانہ کو بچوں کے ساتھ دیکھ کر دھاوا بول دیا، ناہید اور بچوں کو تشدد کا نشانہ بنایا،دوپٹہ کھینچ لیا اور گریبان سے پکڑ کر گھسیٹا اور کپڑے پھاڑ کر نیم برہنہ کردیا، گھر میں داخل ہوتے وقت ملزمان نے دروازے پر چسپاں شدہ عدالتی حکم نامہ بمہ سٹے آرڈررپھاڑ دیا، اور اسلحہ دکھا کر ہم سب کو جان سے مار دینے کی دھمکیاں دے کر سر عام للکارے مارنے لگے کہ عدالت میں ہمارا کیا بگاڑ لینا ہے۔

مزید :

علاقائی -