جعلسازی اور گاڑیوں کی چوری روکنے کیلئے ایف بی آر نیا نظام لائے گا

جعلسازی اور گاڑیوں کی چوری روکنے کیلئے ایف بی آر نیا نظام لائے گا
جعلسازی اور گاڑیوں کی چوری روکنے کیلئے ایف بی آر نیا نظام لائے گا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) فیڈرل بورڈ آف ریونیو(ایف بی آر) نے گاڑیوں کی رجسٹریشن کا نیا نظام متعارف کرانے کافیصلہ کیا ہے جس کے تحت ہر گاڑی پر خصوصی شناختی نمبر لگایا جائے گا جو وہیکل آئی ڈینٹی فیکیشن (vin ) نمبر کہلائے گا ۔ ایف بی آر نے سینٹرل ڈیٹابیس رجسٹریشن سرور قائم کرنے کا بھی فیصلہ کیا ہے جس کیلئے قانون سازی کی جائے گی اور صوبائی موٹر رجسٹریشن اتھارٹیز بھی مرکزی ڈیٹابیس سے منسلک ہوں گی جبکہ بیرون ملک سے درآمد یا مقامی تیار ہونے والی گاڑیوں کو بھی (Vin ) نمبر پلیٹ جاری کرے گا ۔ایف بی آر کے ذرائع کے مطابق (vin) نمبر کے ساتھ خصوصی بار کوڈ والی سٹرپ لگائی جائے گی اور چاروں صوبوں میں رجسٹریشن اتھارٹیز اس نمبر کے مطابق گاڑی رجسٹر کریں گی جبکہ ایک (vin) نمبر جاری ہونے کے بعد وہی نمبر دوبارہ استعمال نہیں ہو سکے گا ۔ جس گاڑی پر (vin) نمبر نہیں ہو گا وہ غیر قانونی شمار ہو گی اور ان گاڑیوں کے مالکان کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔قانون سازی کے تحت غیر سرکاری نمبر پلیٹ یا خصوصی مارکس والی نمبر پلیٹس کا استعمال مجرمانہ اقدام ہو گا ۔ پرانی گاڑیوں کو (vin ) نمبر لگوانے کیلئے ایف بی آر محدود مدت کی سکیم شروع کرے گا جبکہ سمگل شدہ گاڑیوں کو تحویل میں لے کر (vin )نمبر کے ساتھ نیلام کیا جائے گا ۔ (vin) نمبر لگانے کیلئے جدید ترین مشینیں بیرون ملک سے منگوائی جائیں گی اور ایک مشین کی مالیت آٹھ ہزار ڈالر تک ہو گی۔

مزید : بزنس