ایران نے گیس پائپ لائن کا معاہدہ یک طرفہ طور پر ختم کردیا

ایران نے گیس پائپ لائن کا معاہدہ یک طرفہ طور پر ختم کردیا
ایران نے گیس پائپ لائن کا معاہدہ یک طرفہ طور پر ختم کردیا

  



اسلام آباد (ویب ڈیسک) ایران نے گیس پائپ لائن کا معاہدہ یکطرفہ طور پر ختم کردیا ہے ۔نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق 2 اکتوبر کو اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس کے دوران وزارت پٹرولیم نے انکشاف کیا تھا کہ ایران نے بین الحکومتی تعاون معاہدے کو یکطرفہ طور پر ختم کردیا ہے، ایران پاکستان کو گیس پائپ لائن کی تعمیر کے لئے پچاس کروڑ ڈالرز کی ادائیگی کے لئے بھی تیار نہیں ہے۔ عالمی پابندیوں اور ایران کی جانب سے یکطرفہ طور پر بین الحکومتی تعاون معاہدہ ختم ہونے کی وجہ سے ایران پاکستان گیس پائپ لائن منصوبہ موجودہ شکل میں ناقابل عمل ہوچکا ہے۔ واضح رہے کہ ایران کے ساتھ ماضی میں کئے گئے معاہدے کے مطابق پاکستان ایران سے دسمبر 2014ءتک گیس کی خریداری کا پابند ہے۔ اس معاہدے کے مطابق اگر پاکستان ایران سے گیس کی خریداری نہیں کرتا تو اس صورت میں یکم جنوری 2015ءسے پاکستان کو دس لاکھ ڈالرز یومیہ جرمانہ ادا کرنا پڑے گا۔

مزید : بزنس


loading...