اسلامی جمعیت طلبہ کے تحت دوروزہ ٹیلنٹ ایکسپو کا افتتاح

اسلامی جمعیت طلبہ کے تحت دوروزہ ٹیلنٹ ایکسپو کا افتتاح

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


کراچی (اسٹاف رپورٹر)سابق ناظم اعلیٰ اسلامی جمعیت طلبہ لیاقت بلوچ نے کہا ہے کہ نوجوان اس ملک کا اثاثہ اور سرمایہ ہے ، ملک کی باگ دوڑنوجوان نسل نے سنبھالنا ہے ، کالج میں ضابطہ اخلاق کے تحت ٹیلنٹ کی بنیادپر جمہوریت کی نرسری بنائی جائے ، جمہوری بنیادوں پر مقابلے کی فضاء پیدا کرنے کے لیے طلبہ یونین بحال کی جائے ،اٹھارہویں آئینی ترمیم کے مطابق تعلیم مکمل طور پر صوبوں کے حوالے ہے ، نصاب تعلیم کے حوالے سے بنیاد ی طور پر قومی وحد ت کے فروغ کے لیے قومی سطح پر نصاب تعلیم میں نظر ثانی کی ضرورت ہے ، ملک کے مقتدر طبقوں کی ذمہ داری ہے کہ تعلیم کو طبقاتی کشمکش سے نکالیں ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اسلامی جمعیت طلبہ کے تحت ایکسپوسینٹر میں منعقدہ دوروزہ ٹیلنٹ ایکسپو سے خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ ٹیلنٹ ایکسپو سے وائس چانسلر داؤد یونیورسٹی ڈاکٹر فیض اللہ عباسی ، وزیر ٹرانسپورٹ سندھ ناصر حسین شاہ ، جماعت اسلامی کراچی کے امیر حافظ نعیم الرحمن اور اسلامی جمعیت طلبہ کراچی کے ناظم ہاشم یوسف ابدالی نے بھی خطاب کیا ۔ اس موقع پر نائب امیر جماعت اسلامی سندھ محمد حسین محنتی ،ڈائریکٹرامور خارجہ جماعت اسلامی خواتین ،عائشہ سید رکن قومی اسمبلی،ایس پی شہلا قریشی ،وقاص انجم جعفری ،نجیب ہارون ،بشیر جمعہ ،نائب امیرجماعت اسلامی کراچی ڈاکٹر اسامہ رضی ،ڈپٹی سکریٹریز انجینئر صابر احمد ،انجینئر عبد العزیز ، سکریٹری ا طلاعات زاہد عسکری اور دیگر بھی موجود تھے ۔ علاوہ ازیں لیاقت بلوچ نے اسٹالز کا دورہ کیا اور طلبہ و طالبات کے ٹیلنٹ کو سراہا ۔ جبکہ ٹیلنٹ ایکسپوکے پہلے روز پبلک اور پرائیویٹ25سے زائد جامعات ،40سے زائد کالجز جبکہ 50سے زائد پبلک اور پرائیویٹ اسکولز کے طلبہ و طالبات نے بڑی تعداد میں شرکت کی ۔ لیاقت بلوچ نے ٹیلنٹ ایکسپو کے پہلے روز خطاب کرتے ہوئے مزید کہا کہ اسلامی جمعیت طلبہ کراچی مسلسل چوتھی بار طلبہ و طالبات کے لیے ٹیلنٹ ایکسپو منعقد کرنے پر مبارکباد اور خراج تحسین کی مستحق ہے ، انہوں نے کہا کہ ہمارے ملک میں طلبہ و طالبات میں بے پناہ صلاحیتیں موجود ہیں ، طلبہ معاشرے میں بڑا مقام رکھتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ پروفیشنل اداروں میں طالبات کی تعداد میں اضافہ ہونا خوش آئندہے طالبات کاتعلیم حاصل کرنا نئی نسل کے لیے روشن مستقبل اور اسلامی پاکستان کے لیے بہتر ثابت ہوگا۔ اس وقت ہمارے ملک میں تعلیم کے میدان میں مشکلات پیدا کردی گئی ہیں ، اس ملک کے مستقبل اور عوام کے حوالے سے باہمی طور پر غور کریں ، انہوں نے کہا کہ پارلیمنٹ میں ایک کمیٹی تشکیل دی جائے کہ تعلیم کے حوالے سے کیا مشکلات پیدا ہورہی ہیں ، یہ ایک قومی مسئلہ ہے قیادت کو سوچنے کی ضرورت ہے ۔انہوں نے کہا کہ اٹھارہویں آئینی ترمیم تعلیم کے حوالے سے مکمل طور پر صوبوں کے حوالے ہیں نصاب تعلیم میں بنیادی طور پر قومی وحدت پیدا کرنے کے لیے قومی سطح پر نظر ثانی کی ضرورت ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اسلامی جمعیت طلبہ نے ذہن سازی ،افراد سازی اورطلبہ کو مجتمع کرنے کا فریضہ انجام دیا ہے ۔پاکستان کی یوتھ اپنے مستقبل کے بارے میں مایوس نہیں ہے یہ ملک و ملت سے محبت رکھتے ہیں ایمان ویقین رکھتے ہیں کہ اسلام ہی ان کے مسائل کا بہترین حل ہے، انہوں نے کہا کہ اغیار کی زبان سے تعلیم دینے کے بجائے تعلیم کے تمام ذرائع اردو کی بنیاد پر رکھیں ، جس سے بنیادی مسائل حل ہوسکتے ہیں۔ ڈاکٹر فیض اللہ عباسی نے کہا کہ اسلامی جمعیت طلبہ کو ٹیلنٹ ایکسپو کے انعقاد پر مبارکباد پیش کرتا ہوں انہوں نے کہا کہ اسلامی جمعیت طلبہ کا یونیورسٹیز میں نہایت ہی مثبت کردار رہا ہے جہاں سندھی ، بلوچی ، پٹھان ،پنجابی سب بھائیوں کی طرح رہتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میں دعا گوہوں کہ اللہ تعالیٰ ہماری یوتھ کی کاوشوں اور محنتوں کو کامیاب کرے اور مستقبل میں اس ملک کا لیڈر بنائے تاکہ ہمارا ملک کامیابی کی طرف گامزن ہو۔ ناصر حسین شاہ نے کہا کہ نے کہا کہ اسلامی جمعیت طلبہ کا ٹیلنٹ ایکسپو قابل قدرہے طلبہ و طالبات کی صلاحیتوں کو بروئے کار لانے کے لیے اس طرح کے پروگرامات کے لیے ہم تعاون کے لیے تیار ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ سرکاری اسکولز اور کالجز میں بہتری لائی جائے گی اور اس میں آپ سب کا تعاون درکار ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم چاہتے ہیں کہ تعلیم میں بہتری لائی جائے طلبہ و طالبات کوجو مستقبل کے معمار اور مستقبل کا لیڈر ہیں بہتر مثبت تعلیم مہیا کریں۔