ملک کو سیاسی بحران سے بچانے کیلئے سلیکٹر کو ”لاڈلہ“ چھوڑنا ہو گا: بلاول 

    ملک کو سیاسی بحران سے بچانے کیلئے سلیکٹر کو ”لاڈلہ“ چھوڑنا ہو گا: بلاول 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 
کراچی(آن لائن)چیئرمین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ عمران خان کی دھاندلی زدہ حکومت کو گھر بھیجیں گے،ملک کو سیاسی بحران سے بچانے کیلئے سلیکٹر کو اپنا لاڈلہ چھوڑنا ہوگا،موجودہ سلیکٹڈ حکومت میں اداروں کو متنازعہ بنادیا گیا، یہ پاکستان کے ادارے ہیں ان کا تحفظ ہم ہی کریں گے ہم چاہتے ہیں ہمارے ادارے غیر متنازعہ رہیں۔، حکومت کو مزید وقت دینا ملک کی سالمیت سے کھیلنے کے برابر ہوگا لہٰذا اب وقت آگیا ہے کہ سلیکٹڈ حکومت کو گھر بھیجنے کیلئے فیصلہ کن اقدام اٹھایا جائے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سانحہ کارساز کے شہدا ء کی یاد میں منعقدہ جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔بلاول بھٹو نے کہا کہ کیا کوئی بتائے گا کہ پاکستان دنیا میں تنہا کیوں ہے؟ چاہتے ہیں کہ ادارے غیر سیاسی ہوں۔ کیا یہ وہ پاکستان ہے جس کا خواب قائد اعظم نے دیکھا تھا۔بلاول بھٹو نے کہا کہ ملک کو آئی ایم ایف کے پاس گروی رکھ دیا گیا ہے۔ تاریخ میں پہلی بار 3 دن تک انتخابات کے نتائج نہیں دیئے گئے۔انہوں نے کہا کہ معیشت ڈوب رہی ہے۔ بتایا جائے کس نے پاکستان کی خودمختاری پر سودا کیا ہے۔ جس طرف نظر دوڑائیں بے انصافی نظر آئے گی۔ انہوں نے کہا کہ بینظیر بھٹو نے جان دے دی لیکن کسی آمر کے سامنے سر نہیں جھکایا۔ بینظیرمر کر ہمیں جینا سکھا گئیں۔بلاول بھٹو نے کہا کہ آج  پاکستان دنیا میں تنہا کھڑا ہے اور کوئی ملک ساتھ دینے کو تیار نہیں۔ قبل ازیں سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر سے جاری اپنے پیغام میں بلاول بھٹو زرداری نے پی ایس 11 لاڑکانہ میں ضمنی انتخابات کے نتائج کو چیلنج کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ سچ کو چھپایا نہیں جاسکتا، ہم اس سلیکشن کو بے نقاب کریں گیاور دوبارہ انتخابات کروا کر اس سیٹ کو جیتیں گے۔بلاول بھٹو کا کہنا  تھا کہ مجھے اپنے جیالوں پر فخر ہے کہ دباؤ کے باوجود انہوں نے انتخابات کے لئے جدوجہد کی۔انہوں نے الزام عائد کیا کہ قومی احتساب بیورو (نیب)  نے پی پی پی ورکرز اور ان کے خاندانوں کو نوٹسز بھیج کر قبل از انتخابات دھاندلی کی ہے۔چیئرمین پیپلز پارٹی نے کہا کہ خواتین کے پولنگ سٹیشنوں پر جہاں پی پی کی خاصی حمایت تھی، تاخیر سے پولنگ شروع کرائی گئی۔ان کا کہنا تھا کہ میڈیا مسلسل رپورٹ کرتا رہا کہ خواتین ووٹرز کو دھمکایا جارہا ہے کہ وہ جی ڈی اے کو ووٹ دیں، ہماری بار بار شکایات کے باوجود الیکشن کمیشن نے کوئی نوٹس نہیں لیا۔
بلاول بھٹو زرداری

مزید :

صفحہ اول -