اب سگنل توڑنے پر جرمانہ نہیں لائسنس کینسل ہوگا، حکومت نے لاہور میں ترقی یافتہ ملکوں والا قانون لانے کا فیصلہ کرلیا

اب سگنل توڑنے پر جرمانہ نہیں لائسنس کینسل ہوگا، حکومت نے لاہور میں ترقی ...
اب سگنل توڑنے پر جرمانہ نہیں لائسنس کینسل ہوگا، حکومت نے لاہور میں ترقی یافتہ ملکوں والا قانون لانے کا فیصلہ کرلیا

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) حکومت کی جانب سے ٹریفک قوانین پر عملدر آمد کو یقینی بنانے کیلئے ترقی یافتہ ملکوں کی طرح لائسنس کی منسوخی کا قانون لانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

پنجاب سیف سٹیز اتھارٹیز اور ٹریفک پولیس نے نئے قانون کے حوالے سے تجاویز تیارکرلی ہیں جن کی روشنی میں ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے والوں کے لائسنس منسوخی کا سلسلہ شروع کیا جائے گا۔ ڈرائیونگ لائسنس پوائنٹس کی بنیاد پر منسوخ کیا جائے گا، ایک لائسنس ہولڈر کے پاس 20 پوائنٹس ہوں گے جو ختم ہونے پر اس کا لائسنس منسوخ کردیا جائے گا۔

سگنل کی خلاف ورزی ، سیٹ بیلٹ،اوور سپیڈنگ، زیبرہ کراسنگ پر2دو پوائنٹس کم ہوں گے، سات سے ا8بار ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے والے شہری کا ڈرائیونگ لائسنس منسوخ کردیا جائے گا جس کے بعد وہ گاڑی نہیں چلا سکے گا۔

سیف سٹیز اتھارٹی کے چیف آپریٹنگ آفیسر اکبر ناصر خان کے مطابق جس شخص کا لائسنس منسوخ ہوگا اسے تین ماہ ٹریننگ لینی پڑے گی جس کے بعد اس کے لائسنس کی درخواست پر نظر ثانی کی جائے گی۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور