وزیر اعظم فوری مستعفی ہوں،حکومت نے آزادی مارچ کو روکنے کی کوشش کی تو پختون روایات کے مطابق جواب دینگے:مولاناعطاء الرحمن

وزیر اعظم فوری مستعفی ہوں،حکومت نے آزادی مارچ کو روکنے کی کوشش کی تو پختون ...
وزیر اعظم فوری مستعفی ہوں،حکومت نے آزادی مارچ کو روکنے کی کوشش کی تو پختون روایات کے مطابق جواب دینگے:مولاناعطاء الرحمن

  



پشاور(این این آئی)پشاور میں جمعیت علماء اسلام کے زیر اہتمام آل پارٹیز کانفرنس کا اعلامیہ جاری کردیا گیا۔تمام اپوزیشن جماعتوں کا 27اکتوبر کو کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیلئے ریلیاں نکالنے اور 31اکتوبر کو آزاد مارچ میں بھر پور شرکت کا اعلان،اے پی سی نے وزیر اعظم سے مستعفی ہونے کا مطالبہ بھی کردیا، جے یوآئی خیبر پختونخوا کے امیر مولانا عطاء الرحمن نے خبر دار کیا کہ اگر مارچ کے شرکاء کو روکا گیا تو پختون روایات کے مطابق جواب دینگے۔

پشاور میں جمیعت علماء اسلام کے زیر اہتمام ہونے والے آل پارٹیز کانفرنس میں تمام اپوزیشن جماعتوں کے صوبائی قیادت نے شرکت کی، اے پی سی میں فیصلہ کیا گیا کہ 27اکتوبر کو خیبرپختونخو سمیت ملک بھر میں کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیلئے ریلیاں نکالی جائینگی جبکہ 31اکتوبر کو حکومت کیخلا ف آزادی مارچ ہوگا جس میں تمام اپوزیشن جماعتیں بھر پور شرکت کرینگی، اے پی سی نے تاجر برادری اور ڈاکٹرز کے مطالبات کی بھی حمایت کردی جبکہ مولانا فضل الرحمن کی کوریج کو میڈیا کی آزادی سلب کرنے کے مترادف کرادیا،اے پی سی کے بعد میڈیا بریفنگ میں جے یوآئی خیبرپختونخوا کے امیر مولانا عطاء الرحمن کا کہنا تھا کہ آزادی مارچ ہر صورت ہوگا جس میں تمام سیاسی جماعتیں بھر پور شرکت کرینگی، 27اکتوبر کو کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیلئے ریلیاں نکالی جائینگی جبکہ 31اکتوبر کو آزادی مارچ کیلئے 2قافلے اسلام آباد روانہ ہونگے، مولانا عطاء الرحمن کا کہنا تھا کہ حکمرانوں نے ملکی معیشت ڈبو دی ہے، ہرطرف مہنگائی اور بے روزگاری ہے، تاجر،ڈاکٹرز اور تمام مکاتب فکر کے لوگ حکومت کے نشانے پر ہیں ایسے حالات میں حکومت کو فوری مستعفی ہونا چاہیے،مولانا عطاء الرحمن کا کہنا تھا کہ وزیر اعلیٰ نے جمعیت علماء اسلام کو دھمکیاں دی ہیں جبکہ صوبائی اور وفاقی وزراء لب و لہجہ بھی افسوسناک ہے،حکومت نے آزادی مارچ کو روکنے کی کوشش کی تو پختون روایات کے مطابق جواب دینگے۔

مزید : علاقائی /خیبرپختون خواہ /پشاور